سانحہ منیٰ پرایران کاواویلا چورمچائے شور کے مترادف ہے، احمد لدھیانوی

سانحہ منیٰ پرایران کاواویلا چورمچائے شور کے مترادف ہے، احمد لدھیانوی

  

ملتان(نیوز رپورٹر )اہلسنت والجماعت کے سربراہ علامہ محمد احمدلدھیانوی نے کہاکہ سانحہ منیٰ پر ایران کا واویلا چورمچائے شور کے مترادف ہے ،سابق ایرانی سفارتکار نے اسلام کیخلاف (بقیہ نمبر29صفحہ12پر )

سازشوں میں ایران کا چہرہ بے نقاب کردیا،سانحہ کی مکمل تحقیقات کے بعد اس میں ملوث عناصر کو نشان عبرت بنایا جائے، ایران المناک سانحے کو اپنے سیاسی اختلافات،علاقائی تنازعات اور مذہبی نظریات کی بھینٹ نہ چھڑائے ۔ایران اگر سانحے کی تحقیقات کے مطالبے میں مخلص ہے تو سعودی عرب کے ساتھ تعاون کرے،سانحہ منیٰ پر عالم اسلام اضطراب کی کیفیت میں ہے جبکہ ایران مسلسل الزام تراشی میں مصروف ہے۔ان خیالات کا اظہار علامہ محمد احمد لدھیانوی نے حج کی ادایئگی کے بعد وطن واپسی پر علماء کرام کے وفد اور کارکنوں سے گفتگوکرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے مزید کہا کہ ایران کا واویلا چورمچائے شور کے مترادف ہے۔ایرانی حکومت کو اس بات کا خوف ہے کہ اگر شفاف تحقیقات ہوئیں تو اس سانحہ کے ذمہ داروں اور بنیادی کرداروں میں اس کے اپنے شہریوں کا ہاتھ ظاہر ہوجائے گا،تحقیقات کا مطالبہ دراصل اپنی سیاست چمکانا ہے،سابق ایرانی سفارتکارکا بیان سے یہ واضح ہوجاتا ہے کہ یہ سانحہ ایک منظم سازش کا حصہ تھا،اس سانحہ میں ملوث عناصر عالم اسلام کے مجرم ہیں،عینی شاہدین کے بیانات سے یہ واضح ہوتاہے کہ سابق ایرانی سفارتکار کا بیان حقیقت پر مبنی ہے،عالم اسلام کے عظیم اجتماع پر جس میں دنیا بھر کے مسلمان شریک ہوتے ہیں،اس اجتماع میں سیاسی نعرہ بازی کی جس قدر مذمت کی جائے کم ہے۔اس موقع پر مولانا عمر حیدری،مولانا اسد کا ظمی،مولانا اقبال اظہری،مولانا عبد الخالق علی پوری،مولانا ندیم قاسمی،مولانا شاہد فاروقی سمیت دیگر علماء اور کارکنان موجود تھے۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -