راولپنڈی میں ڈینگی دباؤ کی شکل اختیار کر گئی 24 گھنٹوں میں مزید 93 مریض ہسپتالوں میں داخل

راولپنڈی میں ڈینگی دباؤ کی شکل اختیار کر گئی 24 گھنٹوں میں مزید 93 مریض ...

  

راولپنڈی(سٹی رپورٹر)وزیراعلی شہبازشریف کی ہدایت پر اگرچہ انتظامیہ ڈینگی کی روک تھام کیلئے پوری طرح متحرک ہے لیکن بروقت پیشگی اقدامات نہ ہونے کی بناء پر راولپنڈی میں ڈینگی وبا کی شکل اختیار کرتاجارہا ہے،چوبیس گھنٹوں میں مزید 93ڈینگی سے متاثرہ مریض ہسپتالوں میں پہنچ گئے ،شہر میں خوف و ہراس کی فضا پھیلی ہوئی ہے،جبکہ بیشتر متاثرین کی جانب سے وزیراعلی پنجاب شہبازشریف کی جانب سے سے ہسپتالوں میں علاج معالجے کی بہتر سہولیات کی فراہمی پر تشکر کا اظہارکرتے ہوئے وزیراعلی سے مطالبہ کیا ہے کی پنجاب حکومت اعلی سطح پر انکوائری کرکے پیشگی اقدامات نہ کرنے پر ذمہداروں کا تعین کرئے متعلقہ حکام کے خلاف تادیبی کاروائی کی جائے۔گزشتہ چوبیس گھنٹوں میں مزید93 مریض سرکاری ہسپتالوں میں داخل ہوگئے ہیں،حکومت پنجاب کی ہدایت پر یونین کونسل کی سطح پر انسدادی کاموں کیلئے سپروائزرتعینات کردیے گئے ہر ڈسٹرکٹ آفیسرایک یونین کونسل کا ذمہ دارہوگا ۔ واقعات کے مطابق حکومت پنجاب کی سخت ہدایات کی روشنی میں جاری انسدادڈینگی مہم کے باوجود گذشتہ چوبیس گھنٹوں کے دوران بے نظیر بھٹوجنرل ہسپتال میں 46 ،ہولی فیملی ہسپتال میں 32 اورڈسٹرکٹ ہیڈکوارٹرہسپتال میں 15 شہریوں کو ڈینگی بخارکے شبہ میں داخل کیاگیا جبکہ مزید 39 مریضوں میں ڈینگی بخارکی تصدیق کے بعد سرکاری ہسپتالوں میں اب تک کے تصدیق شدہ مریضوں کی تعداد1120 ہوگئی ہے جن میں سے بے نظیر بھٹوجنرل ہسپتال میں 112 ،ہولی فیملی ہسپتال میں 100 اورڈسٹرکٹ ہیڈکوارٹرہسپتال میں15 مریض اب بھی زیر علاج ہیں،ادھر حکومت پنجاب کی ہدایت پر راولپنڈی میں انسدادڈینگی مہم کو کامیاب بنانے کیلئے نئے سیٹ اپ کا اطلاق کردیاگیاہے جس کے تحت انسدادڈینگی کیلئے کام کرنیو الے تمام سرکاری اداروں کو ضلعی انتظامیہ کے ماتحت کردیاگیا،یونین کونسل کی سطح پر سپروائزرتعینات کردیے گئے جو سیکرٹری یونین کونسل کی ماتحتی میں کام کریں گے اور صحت،واسا،آرڈی اے، ماحولیات سمیت انسدادڈینگی مہم میں حصہ لینے والے تمام اداروں کی مانیٹرنگ کے علاوہ شکایت کی صورت میں اعلی حکام کو رپورٹ دینے اور اس کے ازالہ کیلئے فوری اقدامات کے پابندہوں گے ، سیکرٹری یونین کونسل ڈسٹرکٹ آفیسر ،ڈسٹرکٹ آفیسر علاقہ کے اسسٹنٹ کمشنراور اسسٹنٹ کمشنر اے ڈی سی جی کو جبکہ اے ڈی سی جی ڈی سی او کو رپورٹ کرنے کا پابندہوگاجو روزانہ کی بنیادپر تمام اداروں کی کارکردگی رپورٹ صوبائی حکام کو بھجوانے کے پابندہوں گے دو حصوں میں تقسیم شہروکینٹ کے سب رجسٹراراحمد حسن رانجھا،اسسٹنٹ کمشنر سٹی انچارج ہوں گے جبکہ چھاؤنی کے اسسٹنٹ کمشنر کینٹ اور اسسٹنٹ کمشنر کہوٹہ کے ماتحت کیے گئے ہیں، متعلقہ افسران کسی بھی ادارے سے متعلق شکایت پر اس کے ذمہ داران کے خلاف محکماہ کاروائی کا اختیاربھی رکھیں گے ۔

مزید :

راولپنڈی صفحہ اول -