شہباز شریف ہسپتال اشیا خریداری سکینڈل، آڈٹ رپورٹس پر کارروائی رکوانے کیلئے رابطے شروع

شہباز شریف ہسپتال اشیا خریداری سکینڈل، آڈٹ رپورٹس پر کارروائی رکوانے کیلئے ...

  

ملتان (نمائندہ خصوصی) محکمہ صحت ملتان کے حکام نے شہباز شریف ہسپتال کی مشینری ادویات اور دیگر اشیاء کی خریداری میں کروڑوں روپے کے گھپلے سامنے آنے کے بعد اب اس سکینڈل پر پردہ ڈالنے کی کوشش شروع کر دی ہے۔ اس حوالے سے ای ڈی او آفس کے ایک اہل کار نے آڈٹ رپورٹس پر کارروائی (بقیہ نمبر29صفحہ7پر )

رکوانے کیلئے اعلیٰ افسران سے رابطہ شروع کر دیئے ہیں۔ دوسری جانب ڈی سی او ملتان زاہد سلیم گوندل نے ڈسٹرکٹ ڈیپارٹمنٹس کمیٹی کا اجلاس بھی طلب کر لیا۔ معلوم ہوا ہے شہباز شریف جنرل ہسپتال میں کروڑوں روپے کے گھپلوں کے حوالے سے ایک سرکاری رپورٹ سامنے آنے کے بعد محکمہ صحت کے حکام نے اس رپورٹ پر کارروائی رکوانے کیلئے کام شروع کر دیا ہے۔ اس مقصد کے لئے تمام ذرائع استعمال کئے جا رہے ہیں۔ تاکہ بلیک لسٹ قرضہ سے کروڑوں روپے کی خریداری کے ایشو کو لیگل لائز کیا جاسکے اور اس میگا سکینڈل کا ملبہ ڈی او آفس کی بجائے کسی دوسرے آفس پر ڈالا جا سکے۔ معلوم ہوا ہے۔ اس حوالے سے ایک آڈٹ رپورٹ بھی سامنے آچکی ہے۔ جس پر ای ڈی او آفس کے حکام انتہائی تالاں ہیں۔ دوسری جانب یہ بھی انکشاف ہوا ہے۔ اس سکینڈل پر پردہ ڈالنے کیلئے ابھی تک خریدی گئی مشینری کی انسپکشن رپورٹ تیار نہیں کی اور نہ ہی اہم ترین مشینری کے وارنٹی کارڈز حاصل کئے۔ جس کیوجہ سے کئی سوالات سامنے آرہے ہیں۔ بتایا گیا ڈسٹرکٹ ڈیپارٹمنٹل آڈت کمیٹی کا ایک اہم اجلاس کل ڈی سی او آفس ملتان میں منعقد ہوگا۔ جس میں ڈائریکٹر ڈسٹرکٹ گورنمنٹ آڈٹ، ای ڈی ایف اینڈ پی اور محکمہ صحت ملتان کے حکام شریک ہوں گے۔ اس اجلاس میں ای ڈی او ہیلتھ کی جانب سے شہباز شریف ہسپتال کیلئے خریدی گئی کروڑوں روپے کی مشینری، ادویات کے آڈٹ پیراؤں کا جائزہ لیا جائے گا۔ معلوم ہوا ہے ای ڈی او آفس میں تعینات ایک کلرک اس اجلاس پر اثر انداز ہونے کیلئے دن رات کوشاں ہے۔ دوسری جانب اس ضمن میں امکان ظاہر کیا جا رہا ہے کہ ڈی سی او جو ڈسٹرکٹ ڈیپارٹمنٹ کمیٹی کے چیئرمین بھی ہیں وہ کروڑوں روپے کے آڈٹ پیروں کو ختم کرنے میں اپنا حتمی فیصلہ سنا سکتے ہیں۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -