پاکستان اور امریکہ کے سول ایٹمی ٹیکنالوجی معاہدے پر مذاکرات ہو رہے ہیں،واشنگٹن پوسٹ

پاکستان اور امریکہ کے سول ایٹمی ٹیکنالوجی معاہدے پر مذاکرات ہو رہے ...

  

واشنگٹن( اے این این ) امریکہ کے معروف اخبار’’واشنگٹن پوسٹ‘‘ نے دعویٰ کیا ہے کہ پاکستان اور امریکہ سول ایٹمی ڈیل پر مذاکرات کررہے ہیں۔ گزشتہ روز اپنی رپورٹ میں اخبار نے لکھا کہ ممکنہ ایٹمی ڈیل دونوں ملکوں کیلئے بہت مثبت ثابت ہوگی اور پاکستان کا دیرینہ مطالبہ بھی پورا ہو جائے گا۔ اس ڈیل سے پاکستان کے ایٹمی ہتھیاروں کے کمانڈ اینڈ کنٹرول سسٹم میں بھی بہتری آئے گی ، توقع ہے کہ مستقبل قریب میں دونوں ملک یہ معاہدہ کرلیں گے۔ امریکہ پہلے ہی 2005ء میں بھارت کے ساتھ سول ایٹمی ڈیل کرچکا ہے جس پر پاکستان کے تحفظات چلے آرہے ہیں اور پاکستان کا موقف ہے کہ اسے بھی سول ایٹمی توانائی تک رسائی درکار ہے اور وہ اس کا حق دار ہے۔ پاکستان توانائی کے بحران کا شکار ہے اور اس کے حل کیلئے سول ایٹمی توانائی اہم کردار ادا کرسکتی ہے۔ اخبار نے دعویٰ کیا ہے کہ ممکنہ ڈیل کے بعد پاکستان اپنے ایٹمی پروگرام کو صرف بھارت کی حد تک محدود رکھنے تک راضی ہوسکتا ہے۔ بدلے میں پاکستان کو48رکنی نیو کلیئر سپلائر گروپ تک رسائی حاصل ہوسکتی ہے۔ ذرائع کے مطابق پاکستان اپنے ایٹمی پروگرام پر کسی قسم کی پابندی یا رکاوٹ برداشت کرنے کے موڈ میں نہیں ہے اس لئے دوطرفہ ایٹمی سول ڈیل تاخیر کاشکار ہے۔ معلوم ہوا ہے کہ وزیراعظم نواز شریف کے آئندہ دورہ امریکہ میں ایٹمی سول ڈیل پر مذاکرات کو حتمی شکل دی جائے گی

مزید :

ملتان صفحہ اول -