سنٹرل جیل ملتان میں عمر قید کاٹنے والا مجرم پھندے سے جھول گیا

سنٹرل جیل ملتان میں عمر قید کاٹنے والا مجرم پھندے سے جھول گیا

ملتان(کرائم رپورٹر)سنٹرل جیل ملتان میں عمر قید کاٹنے والے قیدی نے گلے میں پھندہ ڈال کر پنکھے سے لٹک کر خود کشی کرلی۔معلوم ہوا ہے کہ گزشتہ روز سنٹرل جیل ملتان کے ہسپتال میں نفسیاتی مریض40سالہ امیر خان نے بستر کی چادر کو رسی کی شکل دے کر پنکھے میں ڈال کر گردن (بقیہ نمبر18صفحہ12پر )

میں پھندہ ڈال لیا اور لٹک گیا۔جیل عملہ نے فور ی طور پر اسے نیچے اتارا تاہم اس کی گردن کی ہڈی ٹوٹ چکی تھی۔اس بارے سپرنٹنڈنٹ سنٹر ل جیل محسن رفیق کا کہنا ہے کہ 40سالہ امیر خان کچھ عرصہ قبل میانوالی سنٹرل جیل سے انتظامی سطح پر تبادلہ کروا کر لایا گیا تھا۔اسکی دماغی حالت ٹھیک نہ ہونے کی وجہ سے وہ جیل ہسپتال میں زیر علاج تھا۔تاہم اس نے نامعلوم وجوہات کی بنا پر خودکشی کی ہے۔ جیل حکام نے امیر خان کی لاش ورثا کے حوالے کردی۔

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...