وزیراعلیٰ ڈاکٹروں کی ہڑتال سے بے خبر

وزیراعلیٰ ڈاکٹروں کی ہڑتال سے بے خبر

ساہیوال میں ڈسٹرکٹ ہیڈکوارٹر ہسپتال کے ڈاکٹر حضرات نے اپنے مطالبات کے لئے ہڑتال کر رکھی ہے جسے سات روز ہو گئے اور شعبہ بیرونی مریضاں کا کام بالکل ٹھپ اور مریض خوار ہو رہے ہیں کہ ساہیوال کاہسپتال پورے ڈویژن کا بڑا اور ٹیچنگ ہسپتال ہے، ہسپتال کے سینئر پروفیسر اور 113ڈاکٹر ہڑتال پر ہیں، ان کا مطالبہ ہے کہ ساہیوال میڈیکل کالج کے پرنسپل کو تبدیل کیا جائے۔انگریزی معاصر کی خبر کے مطابق گزشتہ روز وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار نے ساہیوال اور اوکاڑہ کا دورہ کیا، یہ اچانک کیا گیا۔ وزیراعلیٰ نے سرکٹ ہاؤس میں ایک اعلیٰ سطحی اجلاس کی صدارت کی اس میں ڈویژن سے تعلق رکھنے والے تمام سرکاری شعبوں کے افسر شامل تھے۔ وزیراعلیٰ نے امن و امان، صفائی، سیوریج، ڈینگی بخار اور دیگر امور کے بارے میں دریافت کیا اور معلومات حاصل کیں، تاہم ڈی ایچ کیو ہسپتال کے ڈاکٹروں کی ہڑتال کا معاملہ زیر غور نہیں آیا اور نہ ہی میڈیا کو مدعو کیا گیاکہ کہیں اس حوالے سے سوال نہ پوچھ لیا جائے۔ خبر کے مطابق ایسا احساس ہوتا ہے کہ وزیراعلیٰ کو جان بوجھ کر بے خبر رکھا گیا اور پوری منصوبہ بندی سے ایسا ہوا۔وزیرعلیٰ اکثر کارکردگی کا جائزہ لینے کے لئے اچانک دورے کرتے ہیں اور اتنے بڑے معاملے سے بے خبر رکھے جاتے ہیں تو پھرگڈگورننس کا سوال تو پیدا ہوتا ہے۔وزیراعلیٰ کے پاس بہت بڑا عملہ ہے ان کو خود خبر ہونا چاہیے جب وہ ایسے اچانک دورے کریں یا چھاپے ماریں تو متعلقہ علاقے اور سرکاری شعبوں کے بارے میں معلومات حاصل کرکے جائیں، اب وزیراعلیٰ کو اس پر کارروائی کرنا چاہیے۔

مزید : رائے /اداریہ


loading...