یو ای ٹی میں سولر پراجیکٹ شروع کرینگے،پروفیسر قیصر

یو ای ٹی میں سولر پراجیکٹ شروع کرینگے،پروفیسر قیصر

  

 پشاور(سٹی رپورٹر)انجیئرنگ یونیورسٹی پشاور کے قائم مقام وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر قیصر علی نے کہا ہے کہ یونیورسٹی میں سولر پراجیکٹ شروع کرینگے جس سے یونیورسٹی کو بجلی بل میں چار کروڑ روپے کی بچت کے علاوہ مستقبل میں واپڈا کو بھی بجلی فراہم کرینگے، طلبہ کی رہنمائی کیلئے ای ار بی اپلیکشن لانچ کی ہے جس سے نہ صرف طلبہ مستفیدہونگے بلکہ انکے والدین کی بھی اپنے بچوں کے تعلیمی پرفارمنس اور دیگر معلومات  تک رسائی ممکن ہوگی جس سے یونیورسٹی میں فیئر فری کام کا اغاز ہوگا ان خیالات کا اظہار  وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر قیصر علی نے میڈیا کے نمائندوں سے تعارفی ملاقات کے دوران کیاپرو وائس چانسلر نے کہا کہ میڈیا کے ذریعے ہی حالیہ تعلیم کے میدان میں درپیش مسائل کو سامنے لاکر حل کیا جا سکتا ہے جبکہ یونیورسٹیز میں ترقی اور طلبہ کی فلاح کیلئے کام کرنے میں اہم کردار ادا کر سکتا ہے انہوں نے کہا کہ یونیورسٹی کے طلبہ کیلئے سٹوڈنٹس فسلیٹیشن سینٹرز قائم کیے ہیں جس سے طلبہ کے مسائل کا خاتمہ ممکن ہوگا اور ان کی کیریئر کے حوالے سے بہتر رہنمائی ہوگی جبکہ اوٹ کم بیسڈ ایجوکیشن سسٹم کے پروگرام کے  متعلق یونیورسٹی میں کام کا آغاز ہوچکا ہے اور 2017میں واشنگٹن اکورڈ میں یونیورسٹی شامل ہونے کے بعد یونیورسٹی آف انجیئرنگ پشاور سے فارغ التحصیل گریجویٹس  بغیر کسی ٹیسٹ کے بیرون ممالک میں جاب کر سکیں گے اور طلبہ کو جدید  بنیادوں پر تعلیم اور تحقیق سے روشناس ہونگے جو وقت کی اہم ضرورت ہے جبکہ طلبہ کو  ڈگری دیکر فارغ کرنا نہیں بلکہ اسے اس قابل بنانا ہے کہ وہ فیلڈ میں جا کے اپنی صلاحتیوں کا لوہا منوائے۔وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹرقیصر علی نے کہا کہ ہمارے ساتھ 200پی ایچ ڈیز ہے جن کے تجربہ اور اصلاحتیوں سے صوبائی حکومت بھرپور فائدہ اٹھا سکتی ہے جبکہ وہ کسی بھی پراجیکٹ میں صوبہ کیلئے کارآمد ثابت ہو سکتے ہیں انہوں نے کہا کہ ہیلتھ انشورنس کے حوالے سے بھی مستقبل میں کام کرینگے جبکہ ریسرچ پراجیکٹ کی مد میں یونیورسٹی کو  مسائل کا سامنا ہے اس طرح  یونیورسٹی کو 300ملین ریسرچ فنڈ درکار ہے جسکے کیلئے صوبائی حکومت اگر کام کریں تو مزید ترقی کے راہیں کھلے گی۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -