بنوں،بھرت اقوام کا ڈاکخانہ کی منتقلی اور بجلی لوڈشیڈنگ کیخلاف مظاہرہ

  بنوں،بھرت اقوام کا ڈاکخانہ کی منتقلی اور بجلی لوڈشیڈنگ کیخلاف مظاہرہ

  

بنوں (نمائندہ خصوصی)اقوام بھرت نے ڈاکخانے کی منتقلی اوربجلی کی لوڈشیڈنگ کے خلاف بھرت آڈہ میں احتجاجی مظاہرہ کرتے ہوئے حکومت سے ناراضگی کا اظہار کیا اُنہوں نے واضح کیا کہ جب ہماری فریاد نہیں سنی جائے گی تو نہ ختم ہونے والا دھرنا دینے پر مجبور ہوجائیں گے احتجاجی مظاہرے سے جمعیت علماء اسلام کے سابقہ نائب ناظم امیر اللہ, پی ٹی آئی کے سابق تحصیل ممبر نیاز احمد, ملک بالی داد خان و دیگر نے خطاب کیا اُنہوں نے کہاکہ بھرت آڈہ میں قائم ڈاکخانہ کو بند کرنے کی سازش کی جارہی ہے جس کی وجہ سے علاقہ مکینوں کو سخت تکلیف کا سامنا کرنا پڑرہاہے ڈاکخانے کو یہاں کے مکینوں سے کافی مالی فائدہ ہے لیکن پتا نہیں کس سازش کے تحت ڈاکخانہ منتقل کیا جارہا ہے اُنہوں نے کہاکہ سڑک کی صورتحال جوں کی توں ہے روڈ کھنڈرات کا منظر پیش کررہا ہے گزشتہ روز مشران نے کمشنر بنوں ڈویژن شوکت علی یوسفزئی سے ملاقات کی اور کمشنر بنوں ڈویژن نے متعلقہ محکمہ کو سفارش کی مگر اب تک اس پر عملدار نہیں ہوا ہے اُنہوں نے کہاکہ لوڈشیڈنگ کی انتہا ہے دوسری جانب آڈے کاٹے جارہے ہیں اُنہوں نے متعلقہ ایس ایچ او امیر خان سے مذاکرات کرتے ہوئے احتجاج ختم کیا اُنہوں نے یقین دلایا کہ اقوام بھرت کی فریاد متعلقہ حکام کو پہنچائیں گے,

مزید :

پشاورصفحہ آخر -