پوچھنا چاہتا ہوں حب الوطنی کا سرٹیفکیٹ کہاں سے ملتا ہے؟ شاہد خاقان

پوچھنا چاہتا ہوں حب الوطنی کا سرٹیفکیٹ کہاں سے ملتا ہے؟ شاہد خاقان

  

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) شاہد خاقان عباسی نے کہا ہے کہ حکومت غداری کے سرٹیفکیٹ بانٹ رہی ہے، پوچھنا چاہتا ہوں حب الوطنی کا سرٹیفکیٹ کہاں سے ملتا ہے، وزرا کو چیلنج ہے آئیں اور غداروں کو گرفتار کرائیں، سردیوں میں گندم ہوگی نہ گیس ملے گی۔پاکستان مسلم لیگ نون کے رہنما شاہد خاقان عباسی نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا وزیراعظم کو پتہ ہی نہیں چینی 110 روپے کلو فروخت ہو رہی ہے، انہیں پتہ ہی نہیں کہ بے روزگاری بڑھتی جا رہی ہے، وزیراعظم کو اس بات کا علم بھی نہیں کہ سی پیک بند ہوچکا۔ انہوں نے کہا ا?زاد کشمیر کے وزیراعظم کیخلاف مقدمہ درج کر دیا، غداری کے مقدمات ملک کی بدقسمتی نہیں تو اور کیا ہے؟ آج پورا ملک رو رہا ہے، بھارت اور مودی ہنس رہے ہیں۔شاہد خاقان عباسی کا کہنا تھا ملک کی خدمت کرنے والے آج غدار ٹھہرے، کہتے ہیں 2 سابق وزیراعظم غدار ہیں، وزیراعظم گواہی کیلئے مقدمے میں شامل ہو جائیں، عوامی مشکلات اور مسائل کی بات کوئی نہیں کرتا، غدار وہ ہوتے ہیں جو عوام کو مشکلات میں ڈالتے ہیں، غدار وہ ہوتے ہیں جو سی پیک پر کام بند کرتے ہیں، حب الوطنی کے سرٹیفکیٹ کہاں سے ملتے ہیں تاکہ میں بھی اپلائی کروں۔لیگی رہنما نے کہا شہباز شریف کو کس نے گرفتار کرایا؟ قائد حزب اختلاف سے کون خوفزدہ تھا؟ وزیراعظم سارا دن اپوزیشن رہنماؤں کی گرفتاری کا سوچتے ہیں، کل شاہدرہ تھانے میں عمران خان کیخلاف پرچہ کرانا چاہتا ہوں، غداری کے مقدمات سے عوام کی تکلیف دور ہوگی؟ وزیراعظم اور وزرا کو بھی پتہ نہیں مقدمہ کون درج کرا گیا، جس کو آرٹیکل 63، 62 کی پرواہ نہ ہو وہ جھوٹے مقدمات درج کراتا ہے۔

شاہد خاقان

مزید :

صفحہ اول -