ملتان کی تعمیرو ترقی کیلئے اہم فیصلے، خصوصی کمیٹی تشکیل، تجاوزات مافیا کو وارننگ 

ملتان کی تعمیرو ترقی کیلئے اہم فیصلے، خصوصی کمیٹی تشکیل، تجاوزات مافیا کو ...

  

 ملتان (سپیشل  رپورٹر) وزیراعلی پنجاب سردار عثمان بزدار نے اولیاء کرام کی دھرتی کی تقدیر بدلنے کیلئے انقلابی اقدام اٹھاتے ہوئے ملتان کی تعمیر و ترقی کے کیلئے تمام سیاسی و انتظامی قیادت کو ایک پلیٹ فارم مہیا کردیا گیا۔کمشنر ملتان ڈویژن جاوید اختر محمود کی سربراہی میں انفراسٹرکچر کی بہتری اور ترقیاتی منصوبوں کی مانیٹرنگ کیلئے خصوصی کمیٹی تشکیل دیدی۔سیاسی قیادت،پولیس اور انتظامیہ کے اعلی افسران مشتمل اپنی نوعیت کی منفرد کمیٹی کو تمام مسائل حل کرنے کا ٹاسک بھی سونپ دیا گیا۔تجاوزات آپریشن،ترقیاتی سکیموں سمیت تمام محکموں کی کارکردگی (بقیہ نمبر36صفحہ 6پر)

بارے انسپکشن کمیٹی کے مینڈیٹ میں شامل کردیئے گئے جبکہ پارلیمانی سیکرٹری ندیم قریشی،آر پی او ملتان، ڈی سی ملتان، ڈی جی ایم ڈی اے، ڈائریکٹر پی ایچ اے، سی او میٹروپولیٹن کارپوریشن کمیٹی کے رکن نامزد کئے گئے۔اس حوالے سے کمشنر جاوید اختر محمود کی سربراہی میں مانیٹرنگ و عملدرآمد کمیٹی کا پہلا اجلاس منعقد ہوا جس میں میں بڑے فیصلے کئے گئے۔ کمشنر نے تجاوزات مافیا کے سرکوبی کیلئے متعلقہ محکموں کا مشترکہ سکواڈ تشکیل دے دیا گیا۔سکواڈ اسسٹنٹ کمشنر سٹی، ایس پی سٹی، میونسپل افسر ریگولیشن اور ڈپٹی ڈائریکٹر ایم ڈی اے پر مشتمل ہوگا۔تمام محکمے تجاوزات کے خلاف الگ الگ آپریشن کرنے کی بجائے کسی ایک منتخب جگہ پر جوائنٹ میگا کریک ڈاؤن کریں گے اور اس علاقے سے تجاوزات کا مکمل صفایا کریں گے۔تجاوزات مافیا کی حوصلہ شکنی کیلئے ضبط شدہ سامان بھاری جرمانہ ادا کرنے تک واپس نہیں ہوگا۔عملدرآمد کمیٹی نے اہم مقامات اور شاہراؤں پر فوری سٹریٹ لائٹس لگانے کا بھی فیصلہ کیا۔ تمام چوکوں شاہراہوں کو برقی قمقموں سے سجایا جائے گا اور شہر کی خوبصورتی بارے جنگی بنیادوں پر کام کیا جائے گا۔کمشنر جاوید اختر محمود نے الٹی میٹم دیتے ہوئے کہا کہ روڈ کٹ کیلئے تمام محکمے کمشنر آفس سے این او سی لینے کے پابند ہونگے۔ کسی پرائیویٹ شخص کو روڈ کٹ لگانے کی اجازت نہ ہوگی اور ایسا کرنا کار سرکار میں مداخلت تصور کیا جائے گا۔انہوں نے حکم دیا کہ بغیر اجازت گزشتہ 3 ماہ میں روڈ کٹ لگانے والے عناصر کیخلاف مقدمات درج کرائے جائیں گے۔ انہوں نے مزید کہا کہ نئی حد بندیوں میں کارپوریشن کی حدود 68 یونین کونسل سے بڑھ کر 92 یونین کونسل ہوگئی ہے۔ ملتان میں صفائی کے نظام میں بہتری لانے کی ضرورت ہے،ویسٹ مینجمنٹ کمپنی اپنی استعداد کار میں اضافہ کرے جبکہ واسا بھی شہر میں سیوریج کی بہتری بارے پلان تشکیل دے۔ کمشنر نے کہا کہ وزیراعلی پنجاب سردار عثمان بزدار کو شہر کی سیوریج حالت کی بہتری اور انفراسٹرکچر کی بحالی کیلئے ملتان پیکج پر جلد بریفنگ دی جائے گی۔ پارلیمانی سیکرٹری ندیم قریشی نے کہا کہ وزیراعلی پنجاب سردار عثمان بزدار اس خطے کی ترقی کے خواہاں ہیں اور انہیں ہمارے مسائل کا بخوبی ادراک ہے۔وزیر اعلیٰ پنجاب اس علاقے کی تعمیر و ترقی کیلئے خصوصی دلچسپی رکھتے ہیں۔ اس موقع پر ڈپٹی کمشنر عامر خٹک نے واسا ریکوری 100 فی صد کرنے کیلئے نجی سیکٹر کو سونپنے کی تجویز دیتے ہوئے کہا کہ واسا کی جانب سے وصول کی جانیوالی ریکوری کا عمل شفاف نہیں۔ شہر کی مثالی صفائی کیلئے ویسٹ مینجمنٹ کمپنی کی استعداد کار میں اضافہ کر رہے ہیں۔ کمپنی کو نئی مشینری اور سینٹری ورکرز بھرتی کرکے قدموں پر کھڑا کرینگے۔ سی پی او ملتان حسن رضا خان نے کہا کہ شہر میں امن و امان کو قائم رکھنے کیلئے پولیس ہر ممکن اقدامات کر رہی ہے۔تجاوزات مافیا کی سرکوبی کیلئے بھی انتظامیہ کیساتھ پولیس مکمل تعاون کرے گی جب شہر کی بے ہنگم ٹریفک کو کنٹرول کرنے کیلئے بھی پلان بنایا جائے گا۔ ڈی جی ایم ڈی اے آغا علی عباس نے کہا کہ شہر کی داخلی خارجی راستوں پر انٹری گیٹس کی تعمیر جلد مکمل کر لی جائے گی۔ غیر قانونی کالونیوں کیخلاف کارروائیوں کا سلسلہ بھی جاری ہے۔ اس موقع پر ڈائریکٹر ڈویلپمنٹ وقاص خاکوانی، ایم ڈی واسا ناصر اقبال، ڈی جی پی ایچ اے عابد ملک اور دیگر افسران بھی موجود تھے۔

ملتان ترقی 

مزید :

ملتان صفحہ آخر -