محکمہ ایکسائز: مقررہ حکومتی اہداف سے زائد ٹیکس وصولیاں‘ اعداد و شمار فائنل 

محکمہ ایکسائز: مقررہ حکومتی اہداف سے زائد ٹیکس وصولیاں‘ اعداد و شمار فائنل 

  

ملتان (نیوز رپورٹر) محکمہ ایکسائز ٹیکسیشن اینڈ نارکوٹکس کنٹرول ملتان نے پراپرٹی اور ٹوکن ٹیکس کی مد میں مقررہ اہداف سے کروڑوں روپے اضافی ریکارڈ ریکوری کرلی ہے محکمہ کی جانب سے ٹیکس وصولیوں کے اعداد و شمار  جاری کرتے ہوئے  ڈسٹرکٹ ایکسائز اینڈ ٹیکسیش آفیسر ایڈمن خالد حسین  قصوری  کے مطابق رواں سال کی پہلی سہہ ماہی میں پراپرٹی ٹیکس کے لیئے مقررہ ہدف 32 کروڑ روپے کے مقابلے میں 37 کروڑ روپے کی ریکارڈ وصولی ہوئی جبکہ(بقیہ نمبر39صفحہ 6پر)

 گز شتہ سال اسی عرصہ کے دوران ہونیوالی ٹیکس وصولیوں سے 5 کڑور روپے زائد  ہے ڈسٹرکٹ ٹیکسیشن آفیسر نے بتایا کہ ڈائریکٹر ایکسائز ٹیکسیشن ملتان ڈویڑن عبداللہ خان جلبانی کی زیر نگرانی ای ٹی اوز اور انسپکٹرز سمیت ملازمین کے موثر ٹیم ورک نے حکومتی رعایتی پیکج کی بھرپور تشہیر اور ڈور ٹو ڈور ٹیکس چالانوں کی فراہمی کو یقینی بنانے کے عمل اور بزنس کمیونٹی کی جانب سے بھرپور تعاون نے حکومت کے مقررہ ٹیکس اہداف سے کہیں زائد ٹیکس وصولیاں ہوئی ہیں  رواں مالی سال میں ضلع ملتان کے لیئے پراپرٹی ٹیکس کا مقررہ ہدف 68 کروڑ 50 لاکھ روپے کے مقابلے میں محکمہ نے پہلی سہہ ماہی کے اختتام پر 39 کروڑ 50 لاکھ روپے کی وصولیاں کرلی ہیں اور 15000 سے زائد ٹیکس گزاروں نے e payment  کے ذریعے 15  کڑور روپے جمع کرائے ہیں جبکہ ملتان ڈویڑن کی سطح پر پراپرٹی ٹیکس کا مقررہ ہدف 93 کروڑ 46 لاکھ روپے کے مقابلے میں پہلی سہہ ماہی میں 50 کروڑ 1 لاکھ 49 ہزار روپے کی ریکوری ہوئی ہے جو کہ گذشتہ سال کے اسی عرصہ کے مقابلے میں 9 کروڑ روپے زائد ہے اسی طرح موٹر ٹیکس کا مقررہ ٹیکس ٹارگٹ 75 کروڑ روپے دیا گیا ہے جبکہ پہلی سہہ ماہی میں 22 کروڑ 86 لاکھ 97 ہزار روپے کی ریکوری ہوئی ہے جو کہ گذشتہ سال کے اسی عرصہ کی ٹیکس ریکوری سے 2 کروڑ 69 لاکھ 75 ہزار روپے زائد ہے ڈسٹرکٹ ٹیکسیشن آفیسر خالد حسین قصوری نے بتایا کہ کورونا وباء کے باعث تاجروں سمیت تمام شعبہ ہائے زندگی شدید متاثر ہوئے ہیں تاہم ٹیکس ریکوری مہم میں اہلیان ملتان بالخصوص تاجر برادری نے مکمل تعاون کیا ہے۔

فائنل

مزید :

ملتان صفحہ آخر -