اہم امو ر پر پاکستان اور ترکی کے موقف میں مماثلت خوش آئند: شاہ محمود قریشی 

  اہم امو ر پر پاکستان اور ترکی کے موقف میں مماثلت خوش آئند: شاہ محمود قریشی 

  

 اسلام آباد(سٹاف رپورٹر،مانیٹرنگ ڈیسک، نیوز ایجنسیاں) وزیر خارجہ مخدوم شاہ محمود قریشی کا ترک وزیر خارجہ میولوت چاوش اولو کے ساتھ ٹیلیفونک رابطہ ہوا جس میں دونوں وزرائے خارجہ نے دو طرفہ تعلقات اور علاقائی صورتحال سمیت باہمی دلچسپی کے امور پر تبادلہ خیال کیا۔وزیر خارجہ مخدوم شاہ محمود قریشی نے کہا کہ اہم علاقائی اور عالمی امور کے حوالے سے پاکستان اور ترکی کے موقف میں مماثلت خوش آئند ہے۔ وزیر خارجہ نے مسئلہ کشمیر کے حوالے سے ترکی کی جانب سے مسلسل واضح اور دو ٹوک موقف اپنانے پر ترک وزیر خارجہ کا شکریہ ادا کیا۔ان کا مزید کہنا تھا کہ اقوام متحدہ جنرل اسمبلی کے75ویں اجلاس میں جس طرح ترک صدر رجب طیب اردگان نے نہتے کشمیریوں پر ڈھائے جانے والے مظالم کے خلاف آواز اٹھائی ہے۔ اس سے کشمیریوں کے حوصلے بلند ہوئے ہیں۔ پاکستان، افغان امن عمل سمیت خطے میں قیام امن کیلئے اپنا مثبت کردار ادا کرنے کیلئے پر عزم ہے۔ترک وزیر خارجہ میولوت چاوش اولو نے افغانستان میں قیام امن کی کاوشوں سمیت خطے میں قیام امن کیلئے پاکستان کے کردار کی تعریف کی۔ دونوں وزرائے خارجہ نے علاقائی اور باہمی دلچسپی کے امور پر مشاورتی سلسلہ جاری رکھنے پر اتفاق کیا۔ وزیر خارجہ کی طرف سے ترک ہم منصب کو دورہ پاکستان کی دعوت بھی دی گئی۔وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کی کینیا کی وزیر خارجہ رچل اومامو سے بھی ٹیلیفونک رابطہ ہوا، شاہ محمود قریشی نے کہا کہ انگیج افریقہ پالیسی ہماری حکومت کی اولین ترجیحات میں شامل ہیں۔،  گفتگو میں دو طرفہ تعلقات، تجارتی و اقتصادی تعاون سے متعلق تبادلہ خیال کیاگیا۔ وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا کہ دو طرفہ اقتصادی و تجارتی تعاون کے وسیع مواقع موجود ہیں۔ انگیج افریقہ پالیسی ہماری حکوت کی ترجیحات میں شامل ہے۔ وزیر خارجہ نے کینیائی ہم منصب کو دورہ پاکستان کی دعوت دی جسے کینیائی وزیر خارجہ رچل اومامو نے دورے کی دعوت پر شکریہ ادا کیا۔

شاہ محمود

مزید :

صفحہ اول -