ایم پی اے بلال اصغر وڑائچ کی  نا اہلی کیلئے درخواست کی سماعت غیرمعینہ مدت تک ملتوی

ایم پی اے بلال اصغر وڑائچ کی  نا اہلی کیلئے درخواست کی سماعت غیرمعینہ مدت تک ...

  

 لاہور(نامہ نگارخصوصی)لاہور ہائی کورٹ کی جسٹس عائشہ اے ملک نے پی ٹی آئی کے رکن صوبائی اسمبلی بلال اصغر وڑائچ کی نا اہلی کے لئے دائر درخواست کی سماعت غیرمعینہ مدت تک ملتوی کردی،عدالت نے جامع پنجاب سے بی اے کی سپلیمنٹری امتحان کے اصل داخلہ فارم طلب کر رکھاہے،عدالت نے فیصل آباد بورڈ سے بھی داخلہ سے متعلق رپورٹ طلب کر رکھی ہے،درخواست گزار زاہد رسول کی درخواست پر سماعت کی، دوران سماعت غلام سرورنہنگ ایڈووکیٹ نے عدالت کوبتایا کہ پنجاب اسمبلی ڈگریوں کی تصدیق کے لیے ایک تاریخ مقرر کی تھی جس کے بعد تمام ڈگریوں کوائش کی جانا تھی،جامعہ پنجاب 2010 میں انٹرمیڈیٹ لاہور بورڈ سے پاس کرنے کی  رپورٹ جمع کروائی گئی، 2010 ء میں رپورٹ جمع کروائی اس میں 1995مین انٹرمیڈیٹ پاس کرنے کا بتایا گیا،درخواست گزار کے وکیل نے عدالت کوبتایاکہ ایف اے کی ڈگری جعلی کی وجہ سے بی اے کی ڈگری کوائش ہوئی، ہمارا کیس یہ ہے بلال اصغر وڑائچ نے جھوٹ کا سہارا لیتے ہوئے غلط معلومات دی،جامع پنجاب کے وکیل نے کہا کہ اس وقت بی اے کے دونوں سالوں کا امتحان اکٹھا دیا تھا، پہلے فائنل میں فیل ہوئے اور پھر سپلیمنٹری میں امتحان دیئے،درخواست گزار کے وکیل نے کہا کہ ایم پی اے بلال اصغر وڑائچ جعلی ڈگری کی بناپر الیکشن لڑا،بلال اصغر وڑائچ نے انتخابات کے لیے کاغذات نامزدگی میں حقائق کو چھپایا،عدالت سے استدعاہے کہ بلال اصغر وڑائچ کے انتخابات کوکالعدم قراردیاجائے۔

سماعت ملتوی 

مزید :

پشاورصفحہ آخر -