8 اکتوبر 2005 کے زلزلے کی تباہی ذہنوں پر تاحال نقوش ہے ، وزیر اعلیٰ پنجاب

8 اکتوبر 2005 کے زلزلے کی تباہی ذہنوں پر تاحال نقوش ہے ، وزیر اعلیٰ پنجاب
8 اکتوبر 2005 کے زلزلے کی تباہی ذہنوں پر تاحال نقوش ہے ، وزیر اعلیٰ پنجاب

  

لاہور( ڈیلی پاکستان آن لائن ) وزیر اعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار نے قدرتی آفات سے آگاہی اور بچاؤ کے قومی دن کے موقع پر پیغام میں کہا کہ 8 اکتوبر 2005 کو آنے والا زلزلہ پاکستان کی تاریخ کا ہولناک زلزلہ تھا، اس کی تباہی ذہنوں پر نقش ہے ۔

وزیر اعلیٰ پنجاب نے کہا کہ  زلزلے میں جاں بحق افراد کے اہل خانہ کے ساتھ مکمل ہمدردی کا اظہار کرتے ہیں، پاکستانی قوم نے ہمیشہ ثابت کیا کہ وہ آزمائش کی ہر گھڑی پر پورا اترتی ہے،  قوم نے زلزلے سے متاثرہ بھائیوں کی کھلے دل سے مدد کرکے ایثار و قربانی کی مثال قائم کی۔

سردار عثمان بزدار نے کہا کہ ہماری حکومت نے تین برس میں پنجاب میں قدرتی آفات سے نمٹنے کیلئے متعلقہ اداروں کو جدید تربیت اور ٹیکنالوجی سے لیس کیا ہے،  پنجاب ڈیزاسٹرمینجمنٹ اتھارٹی اور ریسکیو 1122 کو جدید تقاضوں سے ہم آہنگ کیا گیا ہے، پنجاب میں ریسکیو سروس کا دائرہ کارنچلی سطح پر لیکر گئے ہیں۔

وزیر اعلیٰ پنجاب نےمزید کہا کہ پنجاب میں پہلی بار ریسکیوایئر ایمبولینس شروع کی جارہی ہے،  قدرتی آفت کی صورت میں موثر رسپانس میکانزم ضروری ہے،  تربیت یافتہ ہیومن ریسورس ڈیزاسٹر مینجمنٹ میں موثر کردار ادا کرتی ہے،  یہ دن منانے کا مقصدعوام کو احتیاطی تدابیر اور بچاؤ کے طریقہ کار سے آگاہ کرنا ہے۔ 

مزید :

قومی -ماحولیات -علاقائی -پنجاب -