صرف 3 ماہ میں چائلڈ پورنو گرافی کی کتنی ویب سائٹس بند کی گئیں؟ ایف آئی اے کا تہلکہ خیز انکشاف

صرف 3 ماہ میں چائلڈ پورنو گرافی کی کتنی ویب سائٹس بند کی گئیں؟ ایف آئی اے کا ...
صرف 3 ماہ میں چائلڈ پورنو گرافی کی کتنی ویب سائٹس بند کی گئیں؟ ایف آئی اے کا تہلکہ خیز انکشاف

  

اسلام آباد ( ڈیلی پاکستان آن لائن) علی خان جدون کی زیر صدارت قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی انفارمیشن ٹیکنالوجی کا اجلاس ہوا جس میں ایف آئی اے نے بریفنگ دی کہ تین ماہ میں  چائلڈ پورنو گرافی والی دو ہزار ویب سائٹس بند کر دی گئیں ۔

نجی ٹی وی جیو نیوز کے مطابق اجلا س میں ایف آئی اے حکام کی جانب سے بتایا گیا کہ ملک میں ایف آئی اے سائبر کرائم ونگ کے سٹاف کی تعداد 350ہے ، پی ٹی اے نے تین ماہ میں سات ہزار 647ویب سائٹس بلاک کیں ، اسلام مخالف ایک ہزار104، فرقہ وارانہ مواد پر تین ہزار ویب سائٹس بلاک کیں ۔ 

ایڈیشل ڈائریکٹر ایف آئی اے نے بتایا کہ سائبر کرائم ونگ میں مزید 1100بھرتیاں کی جا رہی ہیں ۔ رکن کمیٹی ناز بلوچ نے کہا کہ ایف آئی اے نے ارکان پارلیمان کو ہراساں کیا ، ممبران کو اس بات پر نوٹس بھیجے کہ آپ نے واٹس ایپ پر ویڈیو موصول کیوں کی ، اگر کوئی ویڈیو بھیجتا ہے تو اسے پکڑیں ۔

سیکرٹری وزارت آئی ٹی نے کہا کہ نظر ثانی سوشل میڈیا رولز کابینہ منظور کر چکی ہے ، نظر ثانی شدہ رولز کا دو ہفتوں میں نوٹیفکیشن جاری کریں گے ، نئے روزل میں پی ٹی آے کو زیادہ اختیار دیا گیا ہے ۔

ارکان کمیٹی نے اعتراض کیا کہ تین سال سے ڈی جی ایف آئی اے کمیٹی کی ہدایات نظر انداز کر رہے ہیں ،قائمہ کمیٹی نے چیئرمین پی ٹی اے کو آئندہ اجلاس میں طلب کرلیا۔

مزید :

قومی -جرم و انصاف -