قومی سلامتی کمیٹی اجلاس کا اعلامیہ جاری کردیا گیا

قومی سلامتی کمیٹی اجلاس کا اعلامیہ جاری کردیا گیا
قومی سلامتی کمیٹی اجلاس کا اعلامیہ جاری کردیا گیا

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)وزیراعظم عمران خان  کی زیر صدارت ہونے والے قومی سلامتی کمیٹی اجلاس کا اعلامیہ جاری کردیا گیا ہے۔

اعلامیے کے مطابق  وزیراعظم کی زیر صدارت قومی سلامتی کمیٹی کا 34 واں اجلاس  ہوا۔اجلاس میں افغانستان کی موجودہ صورتحال کا جائزہ لیاگیا۔اجلاس میں وفاقی وزرا، مسلح افواج اور انٹیلی جنس اداروں کے سربراہان نے  شرکت کی ۔اجلاس میں  خطےمیں بدلتی صورتحال اورپاکستان پراثرات سےمتعلق امورکااحاطہ کیا گیا۔ شرکا نے پرامن،مستحکم افغانستان کیلئے پاکستان کے بھرپورعزم کا اعادہ   کیااور افغانستان میں بین الاقوامی برادری کےفوری کردارپرزور دیا۔اجلاس میں اتفاق کیا گیا کہ  دنیاافغانستان میں انسانی بحران سےبچنےکیلئےمددفراہم کرے،افغان حکومت کیساتھ تعمیری سیاسی اور معاشی روابط  قائم کیے جائیں۔

 وزیراعظم نے اجلاس کے دوران افغانستان سےانخلامیں پاکستان کی بین الاقوامی حمایت پراطمینان کا اظہار کیا،وزیراعظم کا کہنا تھا کہ   پوری دنیا نے پاکستان کےمثبت کردار کو تسلیم کیا ، خطےمیں ابھرتی ہوئی صورتحال انتہائی پیچیدہ ہے۔افغانستان میں عدم استحکام کےپاکستان پراثرات ہوسکتےہیں۔ وزیراعظم نے مربوط پالیسی کی کوششوں کی ضرورت پرزور  دیا۔وزیراعظم نے ہدایت کی کہ  حکومتی سطح پرافغانستان سےمتعلق خصوصی سیل بنایاجائے۔ سیل افغانستان کیلئےانسانی امدادکےبین الاقوامی روابط میں کرداراداکرےگا۔ خصوصی سیل موثربارڈرمینجمنٹ،منفی پھیلاؤروکنےکیلئےکام کرےگا۔

مزید :

اہم خبریں -قومی -