چارجز وصول کرنے کے باوجود25کو آپریٹو سکیموں میں سیوریج لائنیں نہ بچھائی جا سکیں

چارجز وصول کرنے کے باوجود25کو آپریٹو سکیموں میں سیوریج لائنیں نہ بچھائی جا ...

لاہور(شہباز اکمل جندران) واسا نے سیوریج چارجز وصول کرنے کے باوجود شہر کی 25کوآپریٹو اور پرائیو یٹ رھائشی سکیموں میں سیوریج لائنیں نہ بچھائیں،بلکہ 12کروڑ53لاکھ پر مبنی یہ چارجز غیر قانونی طورپر آپریشن و مرمت کے فنڈ میں استعمال کرڈالے، ، معلوم ہوا ہے کہ کسی بھی پرائیویٹ یا کوآپریٹو سوسائیٹی کے قیام کے لیئے واسا کا این او سی ضروری ہے،واسا ایسی رھائشی سکیموں سے چارجز وصول کرنے کے بعد ان میںسیور لائنیں بچھانے کا کام انجام دیتی ہے، لیکن ذرائع سے معلوم ہوا ہے کہ لاہور کی 25سے زائد ایسی پرائیویٹ اور کوآپریٹو رھائشی سکیمیں ہیں جن کی انتظامیہ نے سیورج چارجز کی مد میں واسا کو 12کروڑ 53لاکھ روپے تو جمع کروادیئے ہیں لیکن ان سکیموں میں سیوریج لائنیں نہیں بچھائی گئیں، ایسی پرائیویٹ اور کوآپریٹو رھائشی سکیموں میں آرکیٹیکٹس انجنئیرنگ ھاﺅسنگ سوسائیٹی سے 16لاکھ 90ہزار روپے، کوآپریٹو انجنئیرز ٹاﺅن سوسائیٹی سیکٹر اے ایکسٹینشن کی انتظامیہ سے 26لاکھ 32ہزار روپے، ایڈن ڈویلپمنٹ گروپ کی انتظامیہ سے 19لاکھ 52ہزار روپے، ایڈن آباد ایکسٹینشن ھاﺅسنگ سکیم کی انتظامیہ سے 6لاکھ 57ہزار روپے، اینوائرمینٹل کنسٹرکشن پرائیویٹ لمیٹیڈ کی انتظامیہ سے 13لاکھ 86ہزارو پے، جی ایچ ڈویلپمنٹ کی انتظامیہ سے 5لاکھ 6ہزار روپے، ایچ خان سے 11لاکھ 95ہزارروپے، میاں محمد نعمان سے 10لاکھ 91ہزار روپے، ایکسئین بلڈنگ ڈویژن نمبر 2سے 2لاکھ روپے، مسلم گارڈن ھاﺅسنگ سکیم سے 6لاکھ 24ہزارروپے، نیشنل پولیس فاﺅنڈیشن کوپریٹو ھاﺅسنگ سوسائٹی سے 22لاکھ 14ہزار روپے، پاک عرب ھاﺅسنگ سکیم سے 53لاکھ 13ہزار روپے، پراجیکٹ ڈائریکٹر پنجاب انفرمیشن ٹیکنالوجی سے 85لاکھ 14ہزار روپے، رینجرز سٹی ڈیفنس روڈ کی انتظامیہ سے 23لاکھ 6ہزار روپے، سہگل اسٹیٹ سے ایک لاکھ 41ہزار روپے ، بستی ھاﺅسنگ سکیم کی انتظامیہ سے 79ہزار روپے، گارڈن ھاﺅسنگ سکیم کی انتظامیہ سے 10لاکھ روپے، سپرا یونیورسٹی کی انتظامیہ سے 68ہزار روپے، طارق گارڈن کی انتظامیہ سے 66لاکھ 88ہزار روپے، وحید برادرز کالونی ویلفئیر ھاﺅسنگ سکیم کی انتظامیہ سے 6لاکھ روپے، پی سی ایس آئی آر، فیز ون اور فیز ٹو کی انتظامیہ سے 96لاکھ روپے، پنجاب گورنمٹ ھاﺅسنگ سوسائٹی سے 14لاکھ 56ہزار روپے، پاسکو ایمپلائز کوآپریتو ھاﺅسنگ سوسائٹی سے 5لاکھ 36ہزار روپے، کلا س فور ایمپلائز ھاﺅسنگ سوسائٹی کی انتظامیہ سے 4لاکھ 17ہزار روپے، ریور ویو سوسائٹی کی انتظامیہ سے 5لاکھ 39ہزار روپے، ٹیلی کمیونیکیشن کو آپریٹو ھاﺅسنگ سوسائٹی سے 36لاکھ روپے، ٹپ ایمپلائز کو آپریٹو ھاﺅسنگ سوسائٹی سے 9لاکھ 19ہزار روپے، ٹیک سوسائٹی سے 85لاکھ 60ہزار روپے، یونیورسٹی ایمپلائز ھاﺅسنگ سوسائٹی ،یوای ٹی جی ٹی روڈ سے 17لاکھ 65ہزار روپے،ویلنشیاءفیز فور اینڈ فائیو سے 28لاکھ 20ہزار روپے، واپڈا ایمپلائز کو آپریٹو سوسائٹی سے 99لاکھ 41ہزار روپے وصول کئے گئے لیکن ان سکیموں میں سیوریج لائنیں یا مکمل طورپر بچھائی ہی نہیں گئیں یا پھر ادھورا کام کیا گیا ہے،اس سلسلے میں گفتگو کرتے ہوئے واٹر اینڈسینٹیشن ایجنسی لاہور کے ڈی ایم ڈی فنانس ،آپریشن اور ریکوری تسلیم ثنا اللہ کا کہناتھا کہ وہ معاملے کا جائز ہ لینگے ،انہیں زبانی طورپر کچھ یا د نہیں ہے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1