” جب میرے ساتھ یہ کام ہوا تو میرے اندر اتنی ہمت نہیں تھی کہ خود کو شیشے میں دیکھ سکوں“ مومنہ مستحسن نے اپنے دردناک ماضی سے پردہ اٹھادیا

” جب میرے ساتھ یہ کام ہوا تو میرے اندر اتنی ہمت نہیں تھی کہ خود کو شیشے میں ...
” جب میرے ساتھ یہ کام ہوا تو میرے اندر اتنی ہمت نہیں تھی کہ خود کو شیشے میں دیکھ سکوں“ مومنہ مستحسن نے اپنے دردناک ماضی سے پردہ اٹھادیا

  



کراچی (ڈیلی پاکستان آن لائن) بطور انسان سب لوگوں کی زندگی میں مشکل مراحل بھی آتے ہیں اور جولوگ اس وقت کا بہادری سے مقابلہ کرتے ہیں وہ کامیاب رہتے ہیں اور جو خود پر خوف کو غالب آنے دیتے ہیں وہ گمنامی کی گرد تلے دب جاتے ہیں ، ایسا ہی کچھ گلوکارہ مومنہ مستحسن کے ساتھ بھی ہوا جنہوں نے برے وقت کو اپنی ہمت اور حوصلے سے اچھے وقت میں تبدیل کیا اور آج شہرت کی بلندیوں پر اڑ رہی ہیں۔

ایک ویڈیو پیغام میں مومنہ مستحسن نے اپنے بارے میں گفتگو کرتے ہوئے کہا لوگ سوچتے ہیں کہ مومنہ مستحسن کو راتوں رات شہرت مل گی کیونکہ اس نے راحت فتح علی خان کے ساتھ کوک سٹوڈیو میں گانا گایا تھا۔ سوشل میڈیا پر لوگ طرح طرح کی باتیں کرتے ہیں لیکن یہاں تک پہنچنا میرے لیے کبھی بھی آسان نہیں رہا، سب لوگوں کو مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے اور مجھے بھی بطور انسان مشکلات پیش آئیں۔

”مومنہ مستحسن اور یہ پاکستانی جلد شادی کرنے والے ہیں“ کوک سٹوڈیو سے شہرت پانے والی مومنہ کی کس سے شادی ہونے جا رہی ہے؟ 

انہوں نے کہا کہ ’میری زندگی میں ایک ایسا وقت تھا جب میں بہت ہی پریشان کن صورتحال سے دوچار تھی کیونکہ میں اپنی زندگی کا مشن کھو چکی تھی، میرے اندر اتنی بھی ہمت نہیں تھی کہ اپنے آپ کو شیشے میں دیکھ سکوں‘۔یہ وہ وقت ہوتا ہے جب لوگ آپ کو کہتے ہیں کہ جو ہوا اسے بھول جاﺅ لیکن یہ اتنا آسان نہیں ہوتا ، یہ ایسے نہیں ہے کہ آپ کو اچانک ہی رات کو دو بجے افسردگی کا دورہ پڑ جائے ، یا آپ لوگوں کے سامنے مسکرا رہے ہوں لیکن اندر سے آپ شکست و ریخت کا شکار ہوتے ہیں۔

آج کل نوجوانوں میں مومنہ مستحسن کی آواز سے زیادہ ان کی خوبصورتی کے چرچے ہیں لیکن معروف گلو کارہ بچپن میں کیسی دکھتی تھیں ؟معصومیت سے بھر پور ایسی تصویر سامنے آگئی کہ دیکھ کر آپ بھی پہچان نہ پائیں گے

مومنہ مستحسن نے بتایا کہ اس سب صورتحال سے نکلنے میں ”فارچون کوکی“ نامی کتاب نے ان کی بہت مدد کی۔ انہوں نے یہ کتاب پڑھی اور دوبارہ پڑھی جس کے بعد انہیں زندگی کا مقصد مل گیا۔ انہوں نے کہا کہ تبدیلی آپ کے اندر سے ہی آتی ہے اطمینان کبھی بھی باہر سے حاصل نہیں ہوتا، اگر آپ خود سے پیار کرتے ہیں اور جب آپ اندر سے خوش ہوتے ہیں تبھی زندگی درست ٹریک پر چلتی ہے۔

مزید : تفریح