کرکٹ کرپشن کرنے والوں کو سخت سیزا کیلئے تجاویز پیش 

    کرکٹ کرپشن کرنے والوں کو سخت سیزا کیلئے تجاویز پیش 

  

لاہور(سپورٹس رپورٹر)پی سی بی نے میچوں میں فکسنگ، دھوکہ دہی اور بدعنوانی پر سخت ترین سزا کیلئے تجاویز دی ہیں۔ کھیلوں میں بدعنوانی کرنے والوں کو مجرم ثابت کرنے اور سخت سزائیں دلانے کیلئے پی سی بی باقاعدہ قانون سازی کیلئے حکومت کی مدد بھی کرے گا۔ بورڈ چیئرمین احسان مانی کے مطابق ملک میں کھیلوں میں کرپشن کے سدباب کیلئے مناسب قانون سازی نہیں کی گئی ہے۔2000ء  میں جسٹس ملک محمد قیوم رپورٹ میں حکومت کو تجویز دی گئی تھی کہ ملک میں سٹے بازی کی تحقیقات کرائی جائے تاہم اس پر عمل نہیں ہوا جبکہ کوئی قانون سازی بھی نہیں کی گئی،اس لئے پاکستان کو بار بار شرمندگی کا سامنا کرنا پڑا۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان سپر لیگ کے دوران بھی کوڈ آف کنڈکٹ کی خلاف ورزی پر کھلاڑیوں کو جرمانوں اور پابندیوں کا سامنا رہا۔پی سی بی اینٹی کرپشن سے متعلق معاملات کو بہت زیادہ سنجیدگی سے دیکھ رہا ہے اور اس پر سمجھوتہ یا لچک کا مظاہرہ نہیں کیا جائیگا۔ احسان مانی نے مزید کہا کہ پی سی بی کو عمر اکمل کیخلاف قانونی معاملے میں کسی بھی قسم کا فائدہ نہیں تاہم سب سٹیک ہولڈرز کو واضح پیغام دینا ضروری ہے۔

کہ جو بھی خلاف قانون کام کرے گا،اس سے ہمدردی کا مظاہرہ نہیں کیا جائے گا۔  

مزید :

کھیل اور کھلاڑی -