مقدمہ قتل سے بری پولیس انسپکٹر کی بحالی کیخلاف دائر آئی جی کی درخواست مسترد

      مقدمہ قتل سے بری پولیس انسپکٹر کی بحالی کیخلاف دائر آئی جی کی درخواست ...

  

لاہور(نامہ نگارخصوصی)چیف جسٹس پاکستان مسٹر جسٹس گلزار احمد،مسٹر جسٹس اعجاز الاحسن اور مسٹر جسٹس امین الدین خان پرمشتمل بنچ نے قتل کے مقدمہ سے بری ہونے والے پولیس انسپکٹر علی عمران کی بحالی کے خلاف دائر آئی جی پنجاب پولیس کی درخواست مستردکردی،چیف جسٹس نے ریمارکس دیئے کہ اگر عدم ثبوت کی بنیاد پر پولیس انسپکٹر بری ہوا تو پھراس کی بحالی کیوں نہیں ہوسکتی؟ایڈیشنل ایڈووکیٹ جنرل نے عدالت کو بتایا کہ انسپکٹر علی عمران کو ایک سابق وفاقی وزیر کے قتل کے مقدمہ میں ملوث ہونے کی بنیاد پر ملازمت سے برطرف کیا گیا،پنجاب سروس ٹربیونل نے اسے غیر قانونی طور پر بحال کیا،علی عمران کی طرف سے عدالت میں موقف اختیار کیا گیا کہ انسداددہشت گردی کی عدالت نے محکمہ پولیس کا موقف نظر انداز کرکے اسے 2007ء میں بری کردیاتھا،پنجاب سروس ٹریبونل نے بھی اسے نوکری پربحال کیا،آئی جی پنجاب کی یہ درخواست مسترد کی جائے، فاضل بنچ نے پنجاب سروس ٹربیونل کا پولیس انسپکٹر کو بحال رکھنے کا  فیصلہ برقرار رکھتے ہوئے آئی جی پنجاب پولیس کی درخواست مسترد کردی، فاضل بنچ نے ایڈیشنل ایڈووکیٹ جنرل چودھری ظفر کی مناسب تیاری نہ ہونے کی بنا پر ناراضی کا اظہار بھی کیا،محکمہ پولیس کی جانب سے اے آئی جی ایچ آر سیف المرتضی عدالت میں پیش ہوئے۔

درخواست مسترد

مزید :

صفحہ آخر -