صنعت و تجارت کی بحالی 560میں سے صرف 89ارب جاری 

صنعت و تجارت کی بحالی 560میں سے صرف 89ارب جاری 

  

 کراچی(اکنامک رپورٹر)کورونا وائرس سے متاثرہ صنعت وتجارت کی بحالی کیلئے وزیراعظم عمران خان کی جانب سے اعلان کردہ 560 ارب روپے کے پیکیج میں سے اب تک صرف 89ارب روپے ہی جاری کئے گئے ہیں۔ وزیراعظم پیکیج کے تحت پٹرول اور ڈیزل کے صارفین کو ٹیکس کی مد میں ریلیف دینے کیلئے 70 ارب روپے مختص کئے گئے تھے لیکن اس میں ابھی تک ایک پائی بھی جاری نہیں کی گئی۔ پٹرولیم ڈویژن کے ذرائع کے مطابق ڈیزل و پٹرول بحران کی ایک وجہ یہ بھی ہے کہ آئل مارکیٹنگ کیلئے مختص کردہ 70 ارب روپے کے پیکیج پر پیشرفت نہ ہو ئی۔ دیہاڑی دار مزدوروں کیلئے 200 ارب روپے کے پیکیج کا اعلان کیا گیا تھا تاہم اس میں سے صرف 16 ارب روپے جاری کئے گئے۔ یوٹیلیٹی اسٹورز پر سستی اشیا کی فراہمی کیلئے 50 ارب روپے کا اعلان کیا گیا تاہم اس میں سے صرف 10 ارب روپے جاری کئے گئے۔ ذرائع نے مزید بتایا بجلی اور گیس کے صارفین کو بلوں پر سبسڈی فراہم کرنے کیلئے 100ارب روپے رکھے گئے تاہم اس میں 15 ارب روپے جاری کئے گئے ہیں۔ اسی طرح برآمد کنندگان کو ریلیف دینے کیلئے مختص کردہ 30 ارب روپے میں سے 16 ارب روپے جاری کئے گئے ہیں۔ چھوٹی صنعتوں اور زراعت کو ریلیف دینے کیلئے مختص کردہ 100ارب روپے میں سے 28 ارب روپے جاری کئے گئے ہیں۔

مزید :

صفحہ آخر -