ایسٹرا زینیکا ویکسین کی دس ملین سے زائد خوراکیں پاکستان پہنچ گئیں 

 ایسٹرا زینیکا ویکسین کی دس ملین سے زائد خوراکیں پاکستان پہنچ گئیں 

  

لاہو(پ ر)کرونا وباء کے خلاف عالمی سطح پرکرونا ویکسین کی فراہمی یقینی بنانے کے لیے تشکیل دیئے گئے ادارے کوویکس کے زیر اہتمام برطانیہ کی جانب سے تحفتاً بھیجی گئی ایسٹرزینیکا ویکسین کی 1,008,000خوراکیں اگست2021کے آخر میں پاکستان پہنچ گئیں تھیں۔کوویکس عالمی وبا ء کروناکے خلاف قائم کیا جانیوالا متحدہ اشتراک ہے جس کی رہنمائی  Epidemic Preparedness Innovations (CEPI)، بین الاقوامی ویکسین الائنس (GAVI) اور ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن (WHO) مشترکہ طور پرسرانجام دے رہے ہیں۔ کوویکس عالمی سطح پرویکسین بنانے والے اداروں اور مختلف حکومتوں کے درمیان ویکسین کی مطلوبہ مقدار میں تیاری اور دنیا بھرمیں ضرورت کے مطابق مساوی فراہمی کو یقینی بنایا جاتا ہے۔پاکستان اور خلیجی ممالک میں ایسٹرا زینیکا کے سربراہ سامے الفینگیری (Sameh Elfangary) نے ایسٹرا زینیکاویکسین کی مزید خوراکیں پاکستان پہنچنے پر انتہائی   مسرت کا اظہار کیا۔ ان کاکہنا تھا کہ  برطانیہ کی جانب سے کوویکس کے زیر انتظام ایسٹرا زینیکا کی یہ بڑی کھیپ کرونا وباء کے خلاف جدوجہدمیں انتہائی معاون ثابت ہو گی۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ ہم سب کوویکس کے تحت زیادہ سے زیادہ افراد کو ویکسین تک رسائی فراہم۔کرنے کے لیے ہمہ تن کوشاں ہیں اور اس ضمن میں برطانیہ کی جانب سے یہ تحفہ یقینی طور پر نہایت اہمیت کا حامل ہے۔ایسٹرا زینیکا عالمی سطح پر قائم کیے گئے جون 2020 میں کوویکس میں شامل ہونے والا پہلا دواساز ادارہ تھا اورابتک کمپنی کی تیار کردہ ویکسین کی 113 ملین سے زائدخوراکیں کوویکس کے تحت تقسیم کی جاچکی ہیں۔ ایسٹرا زینیکا عالمی سطح کرونا وبا کے خلاف اپنا کردار ادا کرتے ہوئے زیادہ سے زیادہ ویکیسین کی خوراکیں بغیر کسی منافع کے تسقیم  کر رہا ہے۔  تا حال ایسٹرا زینیکاکی جانب سے ویکیسین ایک ارب سے زائد خوراکیں دنیا بھر میں 170 سے زائدممالک میں تقسیم کی جا چکی ہیں۔

 ان 170 ممالک میں سے دو تہائی ممالک انتہائی غریب اور نہایت کم فی کس آمدنی کے حامل ہیں۔ ایسٹرا زینیکا اس وقت عالمی سطح پر کرونا ویکیسن سپلائی کرنے والا والا تیسرا سب سے بڑا ادارہ ہے۔ 

مزید :

کامرس -