نوشہرہ میں کالج اساتذہ کا نجکاری کیخلاف احتجاجی مظاہرہ

نوشہرہ میں کالج اساتذہ کا نجکاری کیخلاف احتجاجی مظاہرہ

  

 نوشہرہ (بیورورپورٹ)  سرکاری کالجز کی نجکاری اور کالجز اساتذہ کے کلاسوں سے بائیکاٹ کے خلاف نوشہرہ بھر کے کالجز کے طلبا کا احتجاجی مظاہرہ، مظاہرین کی قیادت کالجز آف ٹیکنالوجی نوشہرہ کے جمعیت طلبا اسلام کے صدر عاصم خان علیمزئی کر رہے مظاہرین نے نوشہرہ شوبراچوک کے مقام تک روڈ کو ہر قسم کی ٹریفک کیلئے بند ک،جس سے روڈ پر گاڑیوں کی لبی لبی قطاریں لگ گئیں مظاہرین نے کلاسز سے بائیکاٹ کے خاتمے کیلئے 3دن کا الٹی میٹم دیتے ہوئے کہا ہے کہ اگر اساتذہ نے کلاسز کے بائیکاٹ کا فیصلہ واپس نہ لیا تو ہم بھی اپنا پر امن احتجاج پر تشدد احتجاج میں تبدیل کرکے سڑکوں پر آجائیں گے جسکی تمام تر ذمہ داریاں صوبائی حکومت اور ہائر ایجوکشن کے حکام پر عائد ہوگی اس سلسلے میں متحدہ طلبا معاذ کے زیر اہتمام نوشہرہ بھر کے کالجز کے طلبا نے کالج اساتذہ (پروفیسرز اینڈ لکچرز) کا کلاسز سے بائیکاٹ کے خلاف زبر زدست مظاہرہ کیا اس مظاہرے میں ڈبلیو ایس ٹی، جمعیت طلبا اسلام سمیت دیگر طلبا تنظیموں کے عہدیداروں محمد فیضان، میاں راحت، عثمان، جبران، شاہ زیب، محمد عزیر، عبداللہ، قاضی ہابیل، وقار، شہزاد نے قیادت کی مظاہرے میں ڈبلیو ایس ٹی کے اسد اقبال اور عاقب درانی نے خصوصی طور پر شرکت کی تھی مظاہرے سے خطاب کرتے ہوئے عاصم خان علمزئی، اسد اقبال، شہزاد اور دیگر نے کہا کہ پہلے کورونا اور اب اساتذہ کے مطالبات تسلیم نہ کئے جانے پر کلاسز سے بائیکاٹ کی وجہ سے ہمارے تعلیمی تسلسل کا ستیاناس کیا جا رہا ہے انہوں نے کہا کہ کہی ایسا تو نہیں کہ ایک سازش کے تحت پاکستان اور بلخصوص خیبر پختونخاوہ میں اعلیٰ تعلیم کے حصول کے طلبگار طلبا و طالبات پر اعلیٰ تعلیم کے حصول کے دروازے بند کئے جارہے ہیں اگر ایسا کوئی مذموم منصوبہ ہے تو ہم ایسے مذموم عزائم خاک میں ملادیں گے انہوں نے مزید کہا کہ صوبائی حکومت، ہائر ایجوکیشن کمیشن خیبر پختونخواہ اور کیپلا ملکربیٹھ کر افہام و تفہیم سے اپنے مسائل حل کرکے کالجز کی نجکاری کا فیصلہ واپس لیکر غریب طلبا پر اعلیٰ تعلیم کے حصول کے دروازے بند نہ کریں لیکن اگر پھر بھی ایسا نہ ہوا تو ہم حکومت خیبر پختونخواہ ، ہائر ایجوکیشن کمیشن کے ہر تعلیم دشمن پالیسی کے خلاف دما دم مست قلندر پر مجبور ہوں گے انہوں نے ضلع نوشہرہ کے پوسٹ گریجویٹ کالج، کامرس کالج، ٹیکنیکل کالج میں 3دن کے اندر اندر کلاس سے بائیکاٹ کے خاتمے کا الٹی میٹم دے دیا بصورت دیگر راست اقدام اٹھانے کا اعلان۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -