سندھ میں روزانہ کی بنیاد پر کتنے کورونا ٹیسٹ کئے جا رہے ہیں ؟ وزیراعلیٰ مراد علی شاہ نے بڑا دعویٰ کردیا 

سندھ میں روزانہ کی بنیاد پر کتنے کورونا ٹیسٹ کئے جا رہے ہیں ؟ وزیراعلیٰ مراد ...
سندھ میں روزانہ کی بنیاد پر کتنے کورونا ٹیسٹ کئے جا رہے ہیں ؟ وزیراعلیٰ مراد علی شاہ نے بڑا دعویٰ کردیا 

  

کراچی(ڈیلی پاکستان آن لائن)وزیراعلی سندھ سید مراد علی شاہ نے کہا ہے کہ ٹیکنالوجی اب تمام مسائل، چاہے وہ صحت ہو یا بینکنگ کے متعلق ہوں کا حل رکھتی ہے، آرٹیفشل انٹیلیجنس بھی ایک ٹیکنالوجی ہے، جو سرجری جیسے اہم کام میں استعمال ہوتی ہے،30 سال پہلے جو ٹیکنالوجی پڑھائی یا دکھائی جاتی تھیں اب وہ حقیقت بن چکی ہے، آج سندھ میں کوویڈ کیس کی شرح سات فیصد ہے، ہم 20ہزارکوویڈ ٹیسٹ روزانہ کر رہے ہیں، اس سے قبل 1000 ٹیسٹ کرنے کا سوچنا بھی مشکل تھا،یہ ٹیکنالوجی ہی ہے جس سے مسائل کا حل نکلا۔ 

 کراچی یونیورسٹی میں نمائش کی افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے سید مراد علی شاہ نے کہا کہ 18مارچ 2020 ءکو سندھ میں پہلا کوویڈ مریض انتقال کرگیا تھا، ٹیکنالوجی کی ہی مدد سے ہم نے کوویڈ کے حوالے سے اہم فیصلے کئے، ہمارے بہت سارے فیصلے غیرمقبول تھے لیکن ان سے اچھے نتائج حاصل ہوئے۔ وزیراعلی سندھ نے کہا کہ پبلک پرائیوٹ پارٹنرشپ سے ٹیکنالوجی اور تعلیم میں ہم بہت ترقی کر سکتے ہیں،آج صحت سے منسوب نمائش منعقد کی گئی ہے ،یہ بھی ٹیکنالوجی کی کامیابی کا منہ بولتا ثبوت ہے، ہم نے گزشتہ سال کوویڈ کے حملے کے بعد 500 ملین روپے کا فنڈ قائم کیا، اس فنڈ سے ہم متاثرہ لوگوں کی مدد کرناچاہتے تھے لیکن اس میں جو کامیابی ملنی چاہئے تھی وہ نہیں ملی۔

انہوں نے کہا کہ کوویڈ سے کاروبار متاثر ہوا لیکن اب کاروبار آن لائن ہو رہا ہے، اب اہم اجلاس بھی آن لائن کررہے ہیں جو ٹیکنالوجی کی کامیابی ہے، کوویڈ ریسرچ میں ٹیکنالوجی نےاہم کارنامہ سرانجام دیا ہے،ٹیکنالوجی کا صحت کے میدان میں نمایاں کردار ہے، آج کے دور میں ٹیکنالوجی کا بڑا ہی اہم رول ہے ،اگر ٹیکنالوجی نہ ہو تو میڈیا سے تعلق رکھنے والے افراد بھی اپنا پیغام دنیا تک نہیں پہنچا سکتے، چاہے وہ صحت ہو یا کوئی بھی شعبہ ، اس میں اگرآج کی دنیا میں جدید ٹیکنالوجی سے فائدہ نہیں اٹھائیں گے تو آگے بڑھنا ناممکن ہے ۔

مزید :

علاقائی -سندھ -کراچی -