صرف جنسی عمل نہیں بلکہ اس حرکت سے بھی آپ کو ایڈز جیسی خطرناک بیماریاں لگ سکتی ہیں، سائنسدانوں نے سخت وارننگ دے دی

صرف جنسی عمل نہیں بلکہ اس حرکت سے بھی آپ کو ایڈز جیسی خطرناک بیماریاں لگ سکتی ...
صرف جنسی عمل نہیں بلکہ اس حرکت سے بھی آپ کو ایڈز جیسی خطرناک بیماریاں لگ سکتی ہیں، سائنسدانوں نے سخت وارننگ دے دی

  

لندن (مانیٹرنگ ڈیسک) جنسی بیماریوں میں تیزی سے ہونے والے اضافے پر تحقیق کرنے والے سائنسدانوں نے ایک مخصوص غیر فطری جنسی حرکت کا شوق رکھنے والوں کو خبردار کردیا ہے کہ وہ ایڈز سمیت کئی خوفناک جنسی بیماریوں کے نشانے پر ہیں، لہٰذا فوری طور پر اپنی اصلاح کرلیں۔

اگر ازدواجی فرائض کی ادائیگی میں مشکل پیش آتی ہے تو فوراً یہ ایک کام کرلیں، سائنسدانوں نے شادی شدہ افراد کو دلچسپ ترین مشورہ دے دیا

اخبار دی انڈیپینڈنٹ کے مطابق کنسے انسٹی ٹیوٹ کی ایک تحقیق میں معلوم ہوا ہے کہ مغرب میں 70 فیصد سے زائد لوگ ”اورل جنسی عمل“ کو ازدواجی زندگی کا حصہ بنائے ہوئے ہیں۔ ماہرین کا کہنا ہے کہ یہ غیر فطری عمل جنسی بیماریوں کے پھیلاﺅ کی اہم ترین وجوہات میں شامل ہوچکا ہے اور ایڈز، سوزاک، آتشک اور اعضاءکی سوزش سمیت ہر طرح کی بیماریاں اس عمل کی وجہ سے پھیل رہی ہیں۔

’اتنی فحاشی کی توخیر تھی لیکن تم نے تو حد ہی کردی‘ تھائی لینڈ میں 45 سالہ کنواری خاتون کا ایسا عمل کہ پولیس حرکت میں آگئی

ماہرین نے ہدایت کی ہے کہ جسم کے پوشیدہ حصوں سے منہ اور زبان کو دور رکھ کر ان دردناک بیماریوں سے محفوظ رہا جاسکتا ہے۔ بے احتیاطی کی صورت میں جنسی بیماریوں کے علاوہ ہیپاٹائٹس اے، بی اور سی کے پھیلاﺅ کا خدشہ بھی موجود رہتا ہے۔ نوجوانوں کو اس ضمن میں سخت ترین احتیاط کی ہدایت کی گئی ہے، کیونکہ وہ غیر فطری جنسی رویے اور اس کے نتیجے میں پھیلنے والی بیماریوں کا بڑے پیمانے پر نشانہ بن رہے ہیں۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -