شہباز کے سربراہ بنتے ہی ن لیگ ختم ہوگئی تھی‘ حافظ حسین احمد

شہباز کے سربراہ بنتے ہی ن لیگ ختم ہوگئی تھی‘ حافظ حسین احمد

خان پور ( نمائند ہ پاکستان ) افغانستان صوبہ قندوز میں مدرسہ کے طلباء پر (بقیہ نمبر39صفحہ7پر )

بمباری کر کے معصوم بچوں کے خون کے ساتھ ہولی کھیل کر امریکہ نے ثابت کر دیا ہے ۔ اصل دشمنی اسلام اور قرآن سے ہے۔ دنیا بھر میں دھشت گردی اور مسلم دشمنی میں بلواسطہ یا بلاواسطہ امریکہ کا ہاتھ ہے امریکی بربریت نے پوری دنیا کے مسلمانوں کوہلاکر رکھ دیا ہے۔ اب مسلم حکمرانوں کو بھی جاگ جانا چاہئے اور امریکی غلامی سے نکل آنا چاہیے ان خیالات کا اظہار متحدہ مجلس عمل کے سابق پارلیمانی لیڈر و مرکزی رہنماء جمعیت علماء اسلام پاکستان کے مرکز ی سیکرٹری اطلاعات مولانا حافظ حسین احمد نے حافظ ناصر علیم بھٹی سے فون پر گفتگو کرتے ہوئے کیا ۔ انہوں کہا کہ سابق نا اہل وزیر اعظم کے کپڑے سپریم کورٹ میں دھل اور نا اہل وزیراعظم کے نامزد شاہد خاقان عباسی کے کپڑے اور کوٹ امریکہ میں اتارے جارہے ہیں ۔پیپلز پارٹی اور پی ٹی آئی دونوں ایک کے ساتھ نہیں ہیں۔ لیکن دونوں جن کے ساتھ ہیں ان ہاتھ کی وجہ دونوں ساتھ ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ایم ایم اے بننے کے باوجود ن لیگ اور پی ٹی آئی کی حکومتوں میں مجلس عمل کی دینی جماعتوں کا رہنا ہماری حکمت عملی ہے۔ ہم چاھتے ہیں کہ سراج الحق مولاما سمیع الحق کا دست مبارک پکڑ کر پی ٹی آئی کے حکومتی اتحاد سے باہر نکلیں جبکہ مولانا فضل الرحمٰن ایک ہاتھ میں پروفیسر ساجد میر اور دوسرے میں حافظ عبدالکریم کو پکڑ کر ن لیگ کے اتحاد سے باہر آئیں ۔ انہوں نے کہا کہ ن لیگ تو اسی دن دختم ہو گئی تھی جب نواز شریف کی جگہ شہباز شریف اس کے سربراہ بنے۔ انہوں نے کہ کہ چوہدری نثار اب شہباز شریف کے ساتھ پرواز کریں گے۔

مزید : ملتان صفحہ آخر