فریادی وزیراعظم نے ’’لوٹ کا مال بچاؤ ‘‘ ایمنسٹی سکیم جاری کردی ‘ محمد علی درانی

فریادی وزیراعظم نے ’’لوٹ کا مال بچاؤ ‘‘ ایمنسٹی سکیم جاری کردی ‘ محمد علی ...

اسلام آباد (پ ر) سابق وفاقی وزیر محمد علی درانی نے کہا ہے کہ وزیراعظم شاہد خاقان عباسی چیف جسٹس کے پاس فریاد لے کر

(بقیہ نمبر40صفحہ7پر )

گئے تھے کہ حکمرانوں سے ملک لوٹنے کا لائسنس واپس نہ لیں۔ فریادی وزیراعظم نے لوٹ کا مال بچاؤ ایمنسٹی سکیم جاری کردی ہے۔ ’چیف جسٹس کے پاس پاکستان کا فریادی بن کرگیا‘ کے وزیراعظم کے بیان اور ایمنسٹی سکیم کے اجراء پر تبصرہ کرتے ہوئے سابق وزیراطلاعات نے کہاکہ شاہد خاقان عباسی پاکستان کے وزیراعظم نہیں رہے بلکہ سوئس بنکوں، آف شور کمپنیوں اور غیرملکی جائیدادوں کی صورت میں پانچ سو ارب ڈالر سے زائد لوٹ کا مال اوربیرون ملک اثاثے رکھنے والے لُٹیروں کے ترجمان بن چکے ہیں۔ وزیراعظم کو اعتراض ہے کہ لوٹنے والوں کو کیوں روکا؟ اُن کے خلاف مقدمات کیوں بنے؟ احتساب کیوں شروع کیا؟ وہ چاہتے ہیں کہ نیب کو لٹیروں کی معاونت کا پابند بنایاجائے۔ اورغیرملکی جائیداد، اکاؤنٹس اور کمپنیاں بے نقاب نہ کرتے ہوئے انہیں حکومتی تحفظ فراہم کیاجائے۔ وزیراعظم کو شکایت ہے کہ مقدمات قائم کرکے سپریم کورٹ ، نیب اور جے آئی ٹی نے حکمرانوں کا استحقاق مجروح کیا ہے۔ ستر سال سے جاری چوریوں کو حکمران اپنا استحقاق سمجھتے ہیں۔نئی منطق سکھائی جارہی ہے کہ لوٹ مار کے حق سے حکمرانوں کو محروم کرنا ووٹ کی توہین ہوتی ہے۔

مزید : ملتان صفحہ آخر

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...