تین اوباش ملزمان نے دو لڑکوں کو بد اخلاقی کا نشانہ بنادیا

تین اوباش ملزمان نے دو لڑکوں کو بد اخلاقی کا نشانہ بنادیا

قصور(بیورورپورٹ)مصطفی آباد کے علاقہ سرہالی روڈ پر تین اوباش ملزمان نے دو لڑکوں کو بد اخلاقیکا نشانہ بناڈالا ،تھانہ مصطفی آباد پولیس نے مقدمہ درج کر کے ملزمان کی گرفتاری کیلئے چھاپہ مار ٹیمیں تشکیل دے دیں۔دو معصوم بچوں کو بد اخلاقی کانشانہ بنانے والے ملزمان کو گرفتار کرلیا گیاتفصیلات کے مطابق سرہالی روڈ کے رہائشی ظفر علی نے تھانہ مصطفی آباد میں مقدمہ درج کروایا کہ میرا 15سالہ بیٹا عدنا ن اپنے13سالہ دوست ذیشان ولد عاشق کیساتھ دربار بابا شفیع پر موجودتھے اور وہاں سے کبڈی کا میچ دیکھنے کیلئے کھیتوں میں گئے کہ راستہ میں ملزمان اخلاق عرف بگڑ،شان اوراللہ دتہ عرف سونی زبردستی ویرانے میں لے گئے جہاں پر تینوں ملزمان میرے بیٹے عدنان اور اسکے دوست ذیشان کیساتھ زبردستی بد اخلاقی کی اور تشدد کا نشانہ بھی بنایا ،تھانہ مصطفی آباد پولیس نے مقدمہ درج کر کے تفتیش شروع کردی ،پولیس ترجمان کیمطابق ڈی ایس پی صدر ناصر باجوہ کی زیر نگرانی ایس ایچ او مصطفی آباد اور ایس ایچ او صدر قصور پرمشتمل دو سپیشل ٹیمیں تشکیل دی جاچکی ہیں ملزمان کی گرفتاری کیلئے چھاپے مارے جارہے ہیں لیکن ملزمان گھروں کو تالے لگا کر غائب ہوچکے ہیں جلد ملزمان کو گرفتار کرلیا جائے گا۔قصور(بیورورپورٹ) دو مختلف واقعات کے دوران ،تفصیلات کے مطابق بستی چراغشاہ تھانہ بی ڈویژن قصور کے رہائشی محمد طفیل نے مقدمہ درج کروایا کہ اسکا 7سالہ بھتیجا مظہر شاہ ملزم علی کے گھر سپارہ پڑھنے گیا جہاں پر ملزم نے اسے زبردستی بد اخلاقی کا نشانہ بنا ڈالا ،تھانہ بی ڈویژن پولیس نے ملزم علی کو گرفتار کر لیا،دوسرا واقعہ سرائے مغل کے علاقہ باٹھ کلاں میں پیش آیا جہاں پر سرفراز نے مقدمہ درج کروایا کہ سائل کا پانچ سالہ بیٹا احتشام گلی میں کھیل رہا تھا کہ ملزم کاشف نے چیز دینے کے بہانے ویرانے میں لے گیا جہاں پر ملزم نے میرے بیٹے کو بد اخلاقی کا نشانہ بناڈالا ،تھانہ سرائے مغل پولیس نے مقدمہ درج کر کے ملزم کو گرفتارکرلیا۔

گرفتار

مزید : علاقائی