انتخاب سے پہلے احتساب نہ ہوا تو انقلاب آئے گا،صاحبزادہ حامد رضا

انتخاب سے پہلے احتساب نہ ہوا تو انقلاب آئے گا،صاحبزادہ حامد رضا

لاہور(نمائندہ پاکستان)سنی اتحاد کونسل پاکستان کے چیئرمین صاحبزادہ حامد رضا نے کہا ہے کہ انتخاب سے پہلے احتساب نہ ہوا تو انقلاب آئے گا۔ دنیا میں تیسری عالمی جنگ شروع ہے جس کا نشانہ مسلمان ہیں۔ کالا دھن کو سفید کرنے کی حکومتی سکیم ٹیکس چوروں کی حوصلہ افزائی ہے۔ ممبران اسمبلی کا ن لیگ چھوڑنے کا سلسلہ مزید تیز ہونے والا ہے۔ چیف جسٹس کا سانحہ ماڈل ٹاؤن پر ازخود نوٹس خوش آئند ہے۔ سانحہ ماڈل ٹاؤن کے شہیدوں کو انصاف نہ ملنا المیہ ہے۔

شہباز شریف احتساب سے بچ نہیں سکتا۔ پنکچروں والی نگران حکومت ناقابل قبول ہو گی۔

اس بار الیکشن میں دھاندلی کی کوشش کی گئی تو خون خرابہ ہو گا۔ نظام مصطفے متحدہ محاذ نے الیکشن میں بھرپور حصہ لینے کی تیاری شروع کر دی ہے۔ اہل سنت کا گرینڈ الائنس انتخابات میں حیران کن نتائج دے گا۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے نظام مصطفے متحدہ محاذ کے زیراہتمام 6 مئی کو داتا دربار چوک میں ہونے والے جلسہ کی تیاریوں کے سلسلہ میں منعقدہ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ صاحبزادہ حامد رضا نے مزید کہا کہ قوم عدلیہ اور فوج کے خلاف بدزبانی کرنے والوں کو ووٹ کی طاقت سے مسترد کر دے گی۔ فوج، عدلیہ اور نیب قوم کی امیدوں کا مرکز بن چکی ہے۔ انھوں نے کہا کہ نئی عالمی سرد جنگ میں مسلمانوں کو ٹارگٹ کیا جا رہا ہے۔ کشمیر سے فلسطین اور شام سے برما تک مسلمانوں کا لہو بہہ رہا ہے۔ مسلم حکمران اسلام دشمن طاقتوں کے آلہ کار بنے ہوئے ہیں۔ مقبوضہ کشمیر میں اسرائیل ساختہ کیمیائی ہتھیاروں کا استعمال جنگی جرم ہے۔ بھارت اور اسرائیل کے حکمرانوں پر جنگی جرائم کا مقدمہ چلنا چایئے۔

SHUJA 4

لاہور(نمائندہ پاکستان)پاکستان تحریک انصاف یورپ چیپٹر کی ویانا میں ہونے والی اوور سیز کانفرنس میں پاکستان سے پی ٹی آئی سینٹرل پنجاب کے صدر عبدالعلیم خان نے بطور مہمان خصوصی شرکت کی اور کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ انشاء اللہ عمران خان اقتدار میں آکر پاکستان کو عالمی سطح پر با وقار مقام دلائیں گے اور اپنے وعدے کے مطابق پاکستانی پاسپورٹ کی عزت سے لے کر پاکستانیوں کی بطور خود مختار قوم پہچان کرائیں گے ،عبدالعلیم خان نے کہا کہ گزشتہ70برسوں سے ہمیں وہ لیڈر شپ میسر نہیں آ سکی جو ملک کو صحیح معنوں میں اسلامی و فلاحی ریاست بنا سکے ،ہم سے بعد میں آزادی حاصل کرنے والی ریاستیں کہیں آگے نکل گئیں لیکن ہمیں کبھی روٹی ،کپڑا اور مکان اور کبھی قرض اتارو ملک سنوارو جیسے دلفریب سے بہلایا گیا جبکہ عملی طور پر امیر امیر تر اور غریب غریب تر ہوتا گیا ، عبدالعلیم خان نے کہا کہ عمران خان کی 21سالہ سیاسی جدوجہد کے نتیجے میں آج ملک تبدیلی کے فیصلہ کن موڑ پر کھڑا ہے اور2018کا الیکشن کلیدی کردار ادا کرنے جا رہا ہے ، انہوں نے کہا کہ سمندر پار بسنے والے پاکستانی ماضی سے بڑھ کر عمران خان اور پی ٹی آئی کا ساتھ دیں گے اور انشاء اللہ ملک سے کرپشن اور روائتی سیاست کو ہمیشہ کیلئے خیر باد کہہ دیا جائے گا ،عبدالعلیم خان نے پی ٹی آئی یورپ کی طرف سے اوور سیز کانفرنس کے انعقاد کو سراہا ،یہ امر قابل ذکر ہے کہ پی ٹی آئی اوور سیز پاکستا ن کے رہنما میاں خلیل کی جانب سے ویانا میں یورپی یونین کانفرنس کا انعقاد کیا گیا تھا جس میں پاکستان سے عبدالعلیم خان اور پیرس سے پی ٹی آئی کے رہنماؤں میاں طارق اور یاسر خان نے شرکت کی جبکہ یورپ کے دیگر ملکوں سے آئے ہوئے مقررین نے کہا کہ پاکستان کے مسئلہ کشمیر کے حل کے علاوہ خود انحصاری ،قومی وقار، خود مختاری اور یوتھ کو درپیش مسائل حل طلب ہیں جن پر بیرون ملک بسنے والے پاکستانیوں کو گہری تشویش ہے اور اوور سیز پاکستانی توقع رکھتے ہیں کہ انشاء اللہ عمران خان اور تحریک انصاف اقتدارمیں آکر ملک کو مسائل کی دلدل سے نکالیں گے ۔

مزید : میٹروپولیٹن 4