بھارتی فورسز نے2016سے اب تک 1ہزار 314کشمیر یوں کی بصارت چھین لی

بھارتی فورسز نے2016سے اب تک 1ہزار 314کشمیر یوں کی بصارت چھین لی

سرینگر(آن لائن)مقبوضہ کشمیر میں قابض بھارتی فورسز نے پر امن مظاہرین پر مہلک پیلٹ بندوق کے وحشیانہ استعمال کے ذریعے 2016سے اب تک 1ہزار 314کشمیر یوں کو بصارت سے محروم کر یا ہے۔ میڈیارپورٹ کے مطابق عالمی طبی جرائد میں چھپنے والی مختلف رپورٹوں میں کہا گیا ہے کہ پیلٹ کے دھاتی ذرات لگنے سے بینائی متاثر ہونے کے ساتھ ساتھ انسانی جسم پر اسکے انتہائی مہلک اثرات مرتب ہوتے ہیں۔ امرتسر کے ڈاکٹروں کی ایک ٹیم کی ایک تحقیق کے مطابق اس وقت کی انتہائی جدید ٹیکنالوجی کے باوجود پیلٹ لگنے کے بعد نارمل بصارت کے واپس آنے کے امکانات بہت کم ہوتے ہیں۔ جولائی2016سے اب تک سرینگر کے ایس ایم ایچ ایس ہسپتال میں 1253 پیلٹ متاثرین کا علاج کیا گیا۔واضح رہے کہ بھارتی فورسز نے مقبوضہ کشمیرمیں پیلٹ بندوں کا استعمال 2010کی احتجاجی تحریک کے دوران شروع کیا تھا اور اسکے استعمال سے اب تک بیسیوں کشمیری شہید ہوچکے ہیں۔

مزید : علاقائی

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...