سابق وزراءاعلیٰ بلوچستان عبدالمالک بلوچ اور ثنااللہ زہری کل سپریم کورٹ طلب

سابق وزراءاعلیٰ بلوچستان عبدالمالک بلوچ اور ثنااللہ زہری کل سپریم کورٹ طلب
سابق وزراءاعلیٰ بلوچستان عبدالمالک بلوچ اور ثنااللہ زہری کل سپریم کورٹ طلب

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

کوئٹہ (ڈیلی پاکستان آن لائن)سپریم کورٹ نے کالجزاورہسپتالوں کی حالت زارسے متعلق کیسزکی سماعت کے دوران سابق وزراءاعلیٰ بلوچستان سردار عبدالمالک بلوچ اورثنا اللہ زہری کو کل عدالت طلب کر لیا۔

تفصیلات کے مطابق چیف جسٹس ثاقب نثار کی سربراہی میں 3 رکنی بنچ نے کیس کی سماعت کی، موجودہ وزیراعلیٰ بلوچستان عبدالقدوس بزنجو طلب کرنے پروزیرتعلیم،وزیرصحت کیساتھ عدالت پیش ہوئے۔وزیراعلیٰ بلوچستان نے صحت کی سہولتوں سے متعلق آگاہ کیا

چیف جسٹس پاکستان نے وزیراعلیٰ سے مکالمہ کرتے ہوئے کہاکہ صحت،تعلیم اورپانی عوام کابنیادی حق ہے،یہاں توکوئی پالیسی بھی نہیں۔

وزیراعلیٰ بلوچستان نے کہا کہ ابھی حکومت سنبھالی ہے،حالات بہترکرنےکی کوشش کررہا ہوں،بی ایم سی اورسول ہسپتال کے دورے کئے ہیںاورغفلت کےمرتکب افرادکوہٹادیا ہے

وزیراعلیٰ بلوچستان نے کہا کہ ہمارے پاس وسائل کم ہیں،پالیسی بھی نہیں،پالیسی کاڈرافٹ تیارکرلیا،آج کابینہ میں لائیں گے۔

چیف جسٹس پاکستان نے کہا کہ گوکہ آپ پراتنی ذمہ داری نہیں لیکن یہ سب کس نے کرناہے؟۔چیف جسٹس نے سابق وزراءاعلیٰ بلوچستان عبدالمالک بلوچ اور ثنا اللہ زہری کو کل عدالت میں طلب کر لیا، چیف جسٹس نے کہا کہ عبدالمالک بلوچ 4 سال تک وزیراعلیٰ رہے ،عدالت میں وہ آکر بتائیں انہوں نے اس دوران کیا کام کیا۔

مزید : اہم خبریں /قومی /علاقائی /بلوچستان /کوئٹہ