طبی سہولیات کا فقدان، اسرائیلی جیلوں میں قیداسیر فلسطینی مریضوں کی زندگیاں خطرے میں

طبی سہولیات کا فقدان، اسرائیلی جیلوں میں قیداسیر فلسطینی مریضوں کی زندگیاں ...

راملہ (اے این این ) طبی سہولیات کا فقدان، اسرائیلی جیلوں میں قیداسیر فلسطینی مریضوں کی زندگیاں خطرے میں ہیں،اسرائیلی زندانوں میں پابند سلاسل درجنوں مریض فلسطینیوں کے ساتھ جیل عملہ دانستہ غفلت کامظاہرہ کرتے ہوئے انہیں طبی سہولیات سے محروم رکھے ہوئے ہے۔

مرکزاطلاعات فلسطین کے مطابق فلسطینی اسیران سٹڈی سینٹر کے ترجمان ریاض الاشقر نے کہاہے کہ صہیونی زندانوں میں پابند سلاسل مریض اسیران صہیونی جیلروں کے رحم وکرم پر ہیں، کئی فلسطینی مریض نام نہاد جیل اسپتال الرملہ میں بدترین غفلت کا سامنا کررہے ہیں۔صحت کے عالمی دن کے موقع پرجاری کردہ ایک بیان کہا گیا ہے کہ اسرائیلی انتظامیہ اور جیلر دانستہ طور پر فلسطینی اسیران بالخصوص مریض قیدیوں کو موت کے منہ میں دھکیل رہے ہیں۔ جیلوں میں بیمار پڑے فلسطینی سسک سسک کر جی رہے ہیں۔ انہیں جیل کے اندر اور باہر کسی قسم کی طبی سہولت مہیا نہیں کی گئی ہے۔

اسیران نے کہا ہے کہ جیل انتظامیہ قیدیوں کی بیماریوں کی تشخیص نہیں کراتی اور نہ ہی انہیں پرائیویٹ ہسپتالوں میں علاج کی اجازت دی جاتی ہے۔ زیادہ سے زیادہ انہیں عارضی آرام دینے والی گولیاں پین کلر دیے جاتے ہیں اور نیند اور بے ہوشی کی دوائیوں کے ذریعے انہیں مسلسل تکلیف میں رکھا جاتا ہے۔فلسطینی مندوب برائے اسیران نے کہاہے کہ اسرائیلی جیلوں میں مریض قیدیوں کی تعداد ڈیڑھ ہزار سے زائد ہے مگران میں سے کئی مریضوں کی حالت انتہائی تشویشناک ہے۔

مزید : بین الاقوامی

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...