قبائلی اضلاع سے لاپتہ افراد کے لواحقین کا احتجاجی مظاہرہ

قبائلی اضلاع سے لاپتہ افراد کے لواحقین کا احتجاجی مظاہرہ

  

پشاور(سٹی رپورٹر)قبائلی اضلاع سے لاپتہ افراد کے لواحقین نے ان کی باحفاظت بازیابی کیلئے پشاور پر یس کلب کے سامنے احتجاجی مظاہرہ کیا جس کی قیادت لاپتہ ہونے والے افرادکے لواحقین کر رہے تھے مظاہرین نے ہاتھوں میں پلے کارڈز اوع بینرز اٹھا رکھے تھے جس پر اپنوں کی تصاویر اور ان کی بازیابی کے حق میں نعرے درج تھے۔مظاہرین کا کہنا تھا کہ سال 2012ء سے قبائلی اضلاع سے ہزاروں افراد کو نامعلوم افراد نے اٹھا لیا ہے اور آج تک انکی کوئی خبر نہیں ملا۔انہوں نے کہاکہ ہم نے اپنوں کی بازیابی کیلئے ہر در پر دستک دے مارا لیکن کوئی پرسان حال نہ ملا کیونکہ ان کی غیر موجودگی میں گھروں میں ہر وقت ماتم سا ماحول ہو تاہے کسی کے ماں،بہنیں،بیٹے اور بچے اپنوں کی دیدار کیلئے آنکھیں ترس گئے ہیں لیکن اج تک ایک بھی گھر لوٹ کہ نہ ایا۔انہوں نے کہاکہ ہم ان کیلئے سپریم کورٹ اور ہائی کورٹ بھی پہنچ گئے لیکن ان کی طرف سے بھی مایوسی کے سوا کچھ نہ ملا۔انہوں نے آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ سے اپیل کی ہے کہ پاکستان کے ہر دروازے پر اپنوں کی بازیابی کیلئے دستک دی لیکن کسی نے بھی ہماری فریاد کو نہ سن سکا جبکہ اپ ہمارے اپنوں کی بازیابی کیلئے امید کہ آخری کرن ہو بصورت دیگر ہم خود سوزی کرنے پر مجبور ہو جائے ینگے

مزید :

پشاورصفحہ آخر -