امریکہ نے پاسداران انقلاب ، ایران نے امریکی حکومت ، فوج کو دہشتگردقرار دیدیا

امریکہ نے پاسداران انقلاب ، ایران نے امریکی حکومت ، فوج کو دہشتگردقرار دیدیا

  

واشنگٹن/تہران(این این آئی)امریکہ نے ایران کی فوج پاسداران انقلاب کو عالمی دہشت گرد تنظیم قرار دیدیا۔پیر کو پاسداران انقلاب کو عالمی دہشت گرد قرار دینے کے فیصلے کی منظوری امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے دی۔ڈونلڈ ٹرمپ نے اپنے بیان میں کہا کہ پاسداران انقلاب پر پابندی کا فیصلہ بہت پہلے کرلینا چاہیے تھا۔امریکی صدر نے کہا کہ پاسداران انقلاب کی مداخلتوں کے باعث مشرق وسطیٰ میں قیام امن ناممکن ہے۔ٹرمپ نے کہا کہ پاسداران انقلاب دہشتگری کی پشت پناہی کر رہا ہے، پابندی کے بعد پاسداران انقلاب کی پشت پناہی کرنے والوں کے خلاف بھی کارروائی ہو گی۔اس اعلان کے بعد امریکی اسٹیٹ سیکریٹری مائیک پومپیو نے تمام بینکوں اور کاروباری افراد کو پاسداران انقلاب سے تعلقات کے نتائج سے خبردار کیا ۔انہوں نے صحافیوں کو بتایا کہ دنیا بھر میں تمام کاروباروں اور بینکوں پر ذمہ داری عائد ہوتی ہے کہ وہ اس بات کو یقینی بنائیں کہ جن کمپنیوں سے مالیاتی معاملات طے کر رہے ہیں، ان کا کسی طریقے سے پاسداران انقلاب سے کوئی تعلق نہ ہو۔خیال رہے کہ یہ پہلی مرتبہ ہے کہ امریکا نے کسی دوسرے ملک کے ریاستی ادارے کو دہشت گرد قرار دیا ہے۔پاسداران انقلاب کو دہشت گرد قرار دیئے جانے کے ساتھ ساتھ اس پر پابندیاں بھی عائد کی گئی ہیں، جن کے تحت ایرانی مسلح فوج کے اثاثے منجمد کیے جائیں گے۔اس کے ساتھ ہی امریکی شہریوں پر پاسداران انقلاب کے ساتھ کاروبار کرنے پر بھی پابندی عائد کی گئی ہے۔اس فیصلے کے تحت امریکا کو ان تمام افراد کے داخلے پر پابندی کی اجازت ہوگی جنہوں نے پاسداران انقلاب کو تعاون فراہم کیا۔پینٹاگون اور امریکی انٹیلی جنس ایجنسیوں نے اس اقدام کے تحت پاسداران انقلاب کے عہدیداران سے ملاقات یا بات چیت کی وجہ سے غیر ملکی حکام سے رابطہ کرنے کی اجازت نہ دیے جانے کے امکان پر خدشات کا اظہار کیا ہے۔ایرانی وزارت خارجہ نے بھی امریکی فوج کو دہشت گرد تنظیم قرار دینے کا مطالبہ کیا ہے۔ایرانی وزیر خارجہ جواد ظریف نے امریکی فوج کو دہشتگرد تنظیم قرار دینے کے لیے ایرانی صدر کو خط لکھ دیا۔جواد ظریف نے کہا کہ مغربی ایشیاء میں دہشتگرد گروپوں کی کھلی حمایت کرنے پر امریکی فوج کو دہشتگرد تنظیم قرار دینا چاہیے۔ جبکہ اس کے جواب میں صدر روحانی کی سربراہی میں ایران سپریم سیکیورٹی کونسل نے امریکا کو دہشتگرد حکومت قرار دے دیا۔اس سے قبل امریکا نے پاسداران انقلاب کے چند ذیلی اداروں کو پر پابندیاں عائد کر دی تھیں۔ایرانی وزیر خارجہ محمد جواد ظریف نے امریکا کے اس ممکنہ اقدام پر بات کرتے ہوئے کہا تھا کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کو اس سے زیادہ اور بہتر معلومات ہونا چاہیں، بجائے اس کے کہ وہ اپنے ملک کو ایک اور تباہی کی طرف لے جائیں۔ یہ بیان انہوں نے سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹویٹر پر دیا تھا۔امریکا کی جانب سے ایرانی فوج کو دہشتگرد تنظیم قرار دینے پر ردعمل دیتے ہوئے صدر روحانی کی سربراہی میں ایران سپریم سیکیورٹی کونسل نے امریکا کو دہشتگرد حکومت قرار دے دیا۔غیر ملکی میڈیا کے مطابق ایران نے سرکاری طور پر امریکی فوج کو بھی دہشتگرد تنظیم قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ مغربی ایشیا کے لیے امریکی پالیسیوں نے ایرانی عوام کی زندگی برباد کی۔ امریکا اور اس کے اتحادی مغربی ایشیا میں دہشتگردوں اور ان کی تنظیموں کا دفاع کرتے ہیں۔

مزید :

صفحہ اول -