سٹاک مارکیت ، 599پوائنٹس کی کمی، انڈیکس 6ماہ کی کم ترین سطح پر پہنچ گیا

سٹاک مارکیت ، 599پوائنٹس کی کمی، انڈیکس 6ماہ کی کم ترین سطح پر پہنچ گیا

  

کراچی (اکنامک رپورٹر)پاکستان اسٹاک ایکسچینج میں کاروباری ہفتے کے پہلے روز پیرزبردست مندی رہی اورکے ایس ای100انڈیکس37500،37400 ، 37300، 37200،37100اور37000کی نفسیاتی حدوں سے گرکر6ماہ کی کم ترین سطح پر آگیا،مندی کے نتیجے میں سرمایہ کاروں کے 1کھرب10 ارب 74کروڑروپے سے زائدڈوب گئے ،کاروباری حجم گذشتہ روز کی نسبت 5.14 فیصدزائد جبکہ81.48فیصد حصص کی قیمتوں میں کمی ریکارڈ کی گئی۔پیرکوکاروبار کا آغاز2پوائنٹس کے اضافے سے ہوا ٹریڈنگ کے دوران ایک موقع پر کے ایس ای 100 انڈیکس 37553پوائنٹس کی سطح پر دیکھا گیاتاہم ڈالرکی غیرمستحکم پوزیشن کے سبب مقامی سرمایہ کار تذبذب کا شکار نظرآئے اور اپنے حصص فروخت کرنے کو ترجیح دی ، جس کے نتیجے میں تیزی کے اثرات زائل ہوگئے اور کے ایس ای100انڈیکس 36738پوائنٹس کی نچلی سطح پر ریکارڈ کیاگیاتاہم بعد ازاں توانائی، سیمنٹ، فوڈز، بینکنگ،ٹیلی کام، اسٹیل اور کیمیکلزسیکٹرکی نچلی سطح پر آئی قیمتوں پر غیرملکی سرمایہ کاروں نے خریداری کی ، جس کے نتیجے میں کے ایس ای100انڈیکس کی36900کی نفسیاتی حد بحال ہوگئی تاہم اتارچڑھاؤ کا سلسلہ سارا دن جاری رہا، مارکیٹ کے اختتام پر کے ایس ای 100 انڈیکس599.90پوائنٹس کمی سے 36921.91 پوائنٹس پر بندہوا۔

ماہرین کے مطابق ڈالر کی غیر مستحکم پوزیشن اسٹاک ایکسچینج پر بھی اثر انداز ہورہی ہے اور سرمایہ کار سرمایہ کاری میں دلچسپی نہیں لے رہے۔تجزیہ کاروں کے مطابق ڈالر کی اونچی اڑان اور بیرونی ادائیگیوں کے توازن میں منفی رجحان کے سبب سرمایہ کاری میں حالیہ گراوٹ دیکھنے میں آرہی ہے، حکومت جب تک مستحکم معاشی پالیسی نہیں اپناتی، موجودہ رجحان برقرار رہنے کا خدشہ ہے۔پیرکومجموعی طور پر 351 کمپنیوں کے حصص کا کاروبار ہوا،جن میں سے 50 کمپنیوں کے حصص کے بھاؤمیں اضافہ،286کمپنیوں کے حصص کے بھاؤ میں کمی جبکہ15کمپنیوں کے حصص کے بھاؤ میں استحکام رہا۔سرمایہ کاری مالیت میں 1کھر ب 10 ارب 74 کروڑ 28 لاکھ17ہزار94روپے کی کمی ریکارڈ کی گئی ،جس کے نتیجے میں سرمایہ کاری کی مجموعی مالیت گھٹ کر 75 کھرب 79 ارب 30 کروڑ 8لاکھ43ہزار251روپے ہوگئی۔

پیرکومجموعی طور پر10کروڑ69لاکھ72ہزار800شیئرزکاکاروبارہوا،جوجمعہ کی نسبت52لاکھ32ہزار800شیئرززائد ہیں۔قیمتوں کے اتار چڑھاؤ کے حساب سے نیسلے پاک کے حصص سرفہرست رہے ،جس کے حصص کی قیمت189.60روپے اضافے سے7484.00روپے اورستارہ کیمیکل کے حصص کی قیمت12.48روپے اضافے سے308.88روپے پر بند ہوئی۔نمایاں کمی رفحان میظ کے حصص میں ریکارڈکی گئی،جس کے حصص کی قیمت270.00روپے کمی سے6355.00روپے اوریونی لیورفوڈزکے حصص کی قیمت67.50روپے کمی سے6250.00روپے ہوگئی ۔پیرکوکے الیکٹرک لمیٹڈکی سرگرمیاں1کروڑ9لاکھ2ہزار500شیئرز کے ساتھ سرفہرست رہیں،جس کے شیئرز کی قیمت22پیسے کمی سے4.98روپے اورفوجی سیمنٹ کی سرگرمیاں95لاکھ10ہزارشیئرز کے ساتھ دوسرے نمبر پر رہی،جس کے شیئرزکی قیمت93پیسے کمی سے18.48روپے ہوگئی ۔پیرکوکے ایس ای30انڈیکس261.30پوائنٹس کمی سے17473.28پوائنٹس،کے ایم آئی30انڈیکس1377.02پوائنٹس کمی سے60253.44پوائنٹس جبکہ کے ایس ای آل شیئر انڈیکس396.12پوائنٹس کمی سے27110.50پوائنٹس پر بند ہوا ۔

مزید :

کامرس -