وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا کا لیویز اور خاڈہ دار اہلکاروں کو پولیس میں ضم کرنے کا اعلان

وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا کا لیویز اور خاڈہ دار اہلکاروں کو پولیس میں ضم کرنے ...

  

پشاور(آئی این پی ) وزیراعلی خیبرپختونخوا محمودخان نے قبائلی اضلاع میں خدمات انجام دینے والے 28ہزار لیویز اور خاصہ داراہلکاروں کوپولیس میں ضم کرنے کا اعلان کر تے ہوئے کہاہے کہ یہ انضمام رواں سال اکتوبر تک مکمل ہوگا ،28ہزار اہلکاروں کو پولیس کی طرز پر تمام رینکس، مراعات اور ترقیاں دی جائیں گی، ان اہلکاروں کا مستقبل محفوظ ہوگیا۔وزیراعلی ہا ؤ س پشاور میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے وزیراعلی خیبرپختونخوا محمودخان نے کہا کہ ضم قبائلی اضلاع کے حوالے سے آج تاریخی دن ہے، وزیراعظم نے جو وعدے کیے وہ پورے کریں گے، لاکھوں خاندانوں کو فاقے کرنے پر مجبور نہیں کریں گے، وزیراعلی کا کہنا تھا کہ خاصہ دار اور لیویز کے 22نکاتی ایجنڈے میں سب مطالبات تسلیم کر لیے گئے، تمام لیویز اور خاصہ دار اہلکار پولیس فورس میں ضم ہوگئے، ان کے تمام تحفظات دور کردیے ہیں، یہ 28ہزار اہلکار ہیں جنہیں تربیت دینگے اور پولیس کی طرز پر ہی تمام رینکس، مراعات اور ترقیاں دی جائیں گی۔محمودخان نے کہا کہ وزیراعظم عمران خان کے سر اس کا سہرا ہے کہ ان اہلکاروں کا مستقبل محفوظ ہوگیا، ان کے لیے صوبائی حکومت تمام وسائل فراہم کرینگے، قبائلی اضلاع کے حالات میں لیویزاورخاصہ داروں نے قربانیاں دی ہیں اورہم انہیں ان کی قربانیوں کاصلہ دینگے۔وزیراعلی خیبرپختونخوا کے نوٹی فکیشن کے مطابق اس کام کے لیے 6 ماہ کا وقت دیا گیا ہے اور یہ انضمام رواں سال اکتوبر تک مکمل ہوگا۔

مزید :

صفحہ آخر -