داعش کے مبینہ رکن طلحہ ہارون کی امریکہ حوالگی کیس کا فیصلہ محفوظ

داعش کے مبینہ رکن طلحہ ہارون کی امریکہ حوالگی کیس کا فیصلہ محفوظ

  

اسلام آباد(این این آئی) اسلام آباد ہائی کورٹ نے پاکستانی نژاد امریکی شہری طلحہ ہارون کی امریکہ حوالگی کیس کا فیصلہ محفوظ کرلیا۔ پیر کو اسلام آباد ہائی کورٹ کے جج جسٹس محسن اختر کیانی نے پاکستانی نژاد امریکی شہری طلحہ ہارون کی امریکہ حوالگی کے خلاف کیس کی سماعت کی۔عدالت نے فریقین کے دلائل سننے کے بعد فیصلہ محفوظ کر لیا۔ اڈیالہ جیل میں قید طلحہ ہارون کے والد ہارون الرشید نے بیٹے کی امریکہ حوالگی روکنے کی درخواست دائر کر رکھی ہے ۔21 سالہ طلحہٰ ہارون پر دولت اسلامیہ (داعش) کے رکن ہونے کا الزام ہے اور ان کے خلاف امریکہ میں 2016 میں نیویارک میں حملوں کی منصوبہ بندی کا مقدمہ درج ہے۔ انہیں 2016 میں کوئٹہ سے گرفتار کیا گیا۔انھیں امریکہ کے حوالے کرنے کی کارروائی جاری تھی جسے ہارون الرشید نے عدالت میں چیلنج کیا جس پر اسلام آباد ہائی کورٹ نے حکم امتناع جاری کر دیا تھا۔

فیصلہ محفوظ

مزید :

صفحہ آخر -