بنوں مشران جرگہ، ڈرائیور قتل، ملزمان کی عدم گرفتار ی، پولیس سٹیشن پر قبضہ کا اعلان

بنوں مشران جرگہ، ڈرائیور قتل، ملزمان کی عدم گرفتار ی، پولیس سٹیشن پر قبضہ کا ...

  

بنوں (بیورورپورٹ)احمد زئی وزیر قبائل نے مقتول ٹیکسی ڈرائیور سید رحمن کے قاتلوں کی گرفتاری میں ناکامی پر پولیس کو مذید ڈیڈ لائن دینے کے بجائے جمعہ کے روز ٹاؤن پولیس سٹیشن پر قبضے کا اعلان کردیا احمد زئی وزیر کے مشران کا مشترکہ جرگہ منعقد ہوا جسمیں سابق ایم پی اے فخراعظم ایڈوکیٹ،چیف آف بیزن خیل ملک اسحق خان،ملک عمر حیات خان،سابقہ بلدیاتی نمائندوں ملک زوہیب خان،حلیم زادہ وزیر،تحریک انصاف کے رہنمااور تحصیل ڈومیل کے صدر اسرار خان وزیر،ملک لیاقت علی خان،سابق ایم پی اے ملک عالمگیر خان،ملک دوست محمد خان سمیت قومی مشران نے اظہار خیال کیا اور مشترکہ پریس بریفنگ میں سابق ایم پی اے فخراعظم وزیر نے کہا کہ قوم نے مقتول ٹیکسی ڈرائیور کے قاتلوں کی گرفتاری کیلئے کئی بار جرگوں میں پولیس کو مہلت دی لیکن پولیس سی سی ٹی وی کیمرے کی ریکارڈنگ اور عینی شاہدین کے بیانات کے باجود نہ تو ملزمان کو گرفتار کرسکی نہ ہی قوم کو کسی قسم کی تسلی دی مذید قوم کے صبر کاپیمانہ لبریز ہوگیا ہے اور قوم نے فیصلہ کرلیا ہے کہ ہمیں ایسی پولیس کی ضرورت نہیں جو ہمیں تحفظ نہیں دے سکتی ہے اور جمعہ کے روز وزیر احمد زئی اور بنوچی قوم سے تعلق رکھنے والے افراد ٹاؤن پولیس سٹیشن کا گھیراؤ کریگی اور تھانے کا کنٹرول خود سنبھالے گی انہوں نے وزیر اعظم پاکستان،وزیر اعلیٰ خیبر پختونخوا اور آئی جی پولیس خیبر پختونخوا سے پرزور مطالبہ کیا کہ وہ وہ قوم کا غصہ ٹھنڈا کرنے کیلئے بنوں پولیس پر دباؤ ڈالیں کہ وہ دن دیہاڑے قتل ہونے والے مقتول سید رحمن کے قاتلوں کو گرفتار کریں اور موٹر کار برآمد کرائیں کیونکہ ضلعی پولیس آفسران مکمل طور پر ناکام ہوچکے ہیں اب تک قوم کورونا وائرس صورتحال کی وجہ سے صبر کا مظاہرہ کررہی تھی لیکن مذید صبر نہیں کرسکتی اور جمعہ کو ٹاؤن پولیس سٹیشن لکا ہر صورت گھیراؤ کریں گے چاہے ہمیں جیل بھیجا جائے یا ہم پر گولیاں چلائی جائیں۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -