سانگلہ ہل، 7سٹارشوگرملز کے گودام پر چھاپہ، 3ہزار بوریاں چینی سرکاری گودام منتقل 

سانگلہ ہل، 7سٹارشوگرملز کے گودام پر چھاپہ، 3ہزار بوریاں چینی سرکاری گودام ...

  

  سانگلہ ہل، لاہور(آن لائن)سانگلہ ہل اسسٹنٹ کمشنر سانگلہ ہل سائرہ لونی نے بھاری نفری کے ہمراہ 7سٹار شوگر ملز کے گوداموں کے تالے توڑ کر3ہزار سے زائد چینی کی بوری قبضہ میں لے کر سرکاری گوداموں میں شفٹ کردی۔7سٹار شوگر ملز کے ہندو مالکان کا اسسٹنٹ کمشنر کے خلاف احتجاج۔شوگر ملز میں تیار ہونے والی چینی کا باقائدہ ریکارڈ ملز میں ہے اسسٹنٹ کمشنر سانگلہ ہل نے غیر قانونی طور پر ایکشن کرکے زیادتی کی ہے ہمیں ہماری چینی واپس کی جائے۔ملز انتظامیہ 7سٹار شوگر ملز مالکان نے چینی کو اپنی مرضی کے مطابق مہنگے داموں فروخت کرنے کیلئے پرائیویٹ گوداموں میں غیر قانونی طورپر سٹاک کررکھا تھا۔اسسٹنٹ کمشنر سانگلہ ہل سائرہ لونی کا مؤقف۔تفصیل کے مطابق گزشتہ روزاسسٹنٹ کمشنر سانگلہ ہل نے حکومت پاکستان کی ہدایت کے مطابق چینی کی زخیرہ اندوزی اور ناجائز منافع خوری کے پیش نظرمقامی 7سٹار شوگر ملز کے پرائیویٹ گوداموں میں زخیرہ کی گئی چینی والے گوداموں کے تالے توڑ 3ہزار سے زائد چینی کی بوری قبضہ میں لی۔ادھر سرکاری ذرائع کے مطابق اس چینی کو سرکاری طور پر مقرر کردہ ریٹ کے مطابق فروخت کیا جائے گا ادھر اس واقع کے بعد سانگلہ ہل میں زخیرہ اندوزی اور ناجائز منافع خوری کرنیوالا مافیا زیر زمین چلا گیا ہے جبکہ اسسٹنٹ کمشنر سانگلہ ہل کا کہنا ہے کہ چینی اور آٹے کی زخیرہ اندوزی اور ناجائز منافع خوری کرنیوالوں کو کسی قسم کی رعایت کا مستحق نہیں سمجھا جائے گا۔ علاوہ ازیں نیب اسلام آباد کی ٹیم نے محکمہ خوراک پنجاب کے دفتر پر چھاپہ مارا اور چینی کی برآمد کا ریکارڈ اپنی تحویل میں لے لیا۔ تفصیلات کے مطابق نیب کی جوائنٹ انوسٹی گیشن ٹیم چینی کی برآمد میں شوگر ملز مالکان کو اربوں روپے سبسڈی دینے کی انکوائری کر رہی ہے، جس کے سلسلے میں نیب نے متعدد بار محکمہ خوراک سے گزشتہ تین سالوں کی برآمد کا ریکارڈ طلب کیا تھا لیکن محکمہ خوراک نے مسلسل ریکارڈ کی فراہمی میں لیت و لعل سے کام لیا۔

چینی چھاپہ

مزید :

صفحہ آخر -