باچا خا ن میڈیکل کمپلیکس کو باقاعدہ میڈیکل ٹیچنگ انسٹی ٹیوٹ کا درجہ حاصل 

باچا خا ن میڈیکل کمپلیکس کو باقاعدہ میڈیکل ٹیچنگ انسٹی ٹیوٹ کا درجہ حاصل 

  

 صوابی(بیورورپورٹ)خیبر پختونخوا کے وزیر برائے سیاحت و خزانہ تیمور سلیم خان جھگڑا نے گجو خان میڈیکل کالج اور باچا خان میڈیکل کمپلیکس شاہ منصور صوابی کو باقاعدہ میڈیکل ٹیچنگ انسٹی ٹیوٹ کا درجہ دیتے ہوئے کہا کہ باچا خان میڈیکل کمپلیکس اور گجو خان میڈیکل کالج کو اسٹیٹس دینے سے یہ خیبرپختونخوا سے بڑے ہسپتالوں میں شامل کر دیا گیا اوریہ صوابی کے عوام کے لئے انتہائی خوشی کی بات ہے۔ ان خیالات کااظہار انہوں نے گجو خان میڈیکل کالج اور باچا خان میڈیکل کمپلیکس کے ایم ٹی آئی بورڈ آف گورنر زکے پہلے اجلاس سے خطاب کر تے ہوئے کیا۔ اس موقع پر چیف ایگزیکٹو پروفیسر ڈاکٹر فصیح الزمان اور دیگر بھی موجود تھے۔ صوبائی وزیرصحت نے کہا کہ ایم ٹی آئی بورڈ ممبران کا تعلق بھی اس مٹی سے ہے وہ اپنے علاقے کی بے لوث خدمت کرینگے انہوں نے کہا کہ آئندہ سال بجٹ میں اس ہسپتال کے لئے زیادہ سے زیادہ فنڈ مختص کیاجائیگا انہوں نے کہا کہ اب یہ ہسپتال نہ صرف ضلع صوابی بلکہ دیگر اضلاع کے مریضوں کا بوجھ بھی اُٹھانے کے قابل ہو جائیگا یہ صوبائی حکومت کا صوابی کے عوام کے لئے بڑا تحفہ ہے انہوں نے کہا کہ پشاور، مردان، نوشہرہ، ایبٹ آباد، ڈی آئی خان اور بنوں میں اس طرح کے ایم ٹی آئی پہلے سے موجود ہے۔ اور اب صوابی کو ایم ٹی آئی کر دیا گیا۔ انہوں نے ہسپتال کے مختلف وارڈز کا دورہ کیا اور کہا کہ مجھے امید ہے کہ ایم ٹی آئی بورڈ آف گورنرز کے ممبران محنت اور میرٹ پر اپنے خدمات انجام دیتے رہیں گے۔ انہوں نے کہا کہ بورڈ میں شامل ممبران پاکستان اور بیرون ملک سے میڈیکل کے شعبے میں بھر پور تجربہ رکھتے ہیں ان کی کوششوں سے یہاں کے عوام کے مشکلات کا بر وقت ازالہ ہو جائیگا۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -