جہانگیر ترین نے عدالتوں کا راستہ اختیار کیا، یقین ہے وہ سرخرو ہونگے: فردوس عاشق

جہانگیر ترین نے عدالتوں کا راستہ اختیار کیا، یقین ہے وہ سرخرو ہونگے: فردوس ...

  

 لاہور(نمائندہ خصوصی) فردوس عاشق اعوان نے کہا ہے کہہ عمران خان نے اپنے قریبی ساتھی کو بھی تحفظ نہیں دیا، یہ وزیراعظم کے بلا امتیازاحتساب کی عملی تصویرہے، جہانگیر ترین نے قانونی طو پر عدالتوں کا راستہ اختیار کیا، یقین ہے وہ سرخرور ہونگے۔معاون خصوصی اطلاعات نے لاہور میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ریاست مدینہ بنانے کے عہد میں کوئی اپنا یا پرایا نہیں، ماضی میں اپنے حواریوں کو سرکاری چھتری میں تحفظ دیا جاتا تھا، نئے پاکستان میں وزیراعظم کے قریب ترین ساتھی پر جب انگلی اٹھی تو عمران خان نے سرکاری چھتری اور تحفظ نہیں دیا۔۔فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ لاہور ہائیکورٹ کے حکم کے مطابق چینی کے نرخ مقرر کرنے کی حکومت کو ذمہ داری دی گئی ہے، اپوزیشن نے بھی وہی چینی استعمال کرنی ہے، اپوزیشن ہماری عوام دوست پالیسی پر تنقید کرنے کی بجائے ہماری حوصلہ افزائی کرے، عوام کی سہولت کاری ہماری اولین ترجیح ہے، وزیراعظم کل عوام کو ریلیف دینے اور کسان کارڈ کا اجرا کرنے آ رہے ہیں، عمران خان پسے ہوئے طبقے کیلئے سستے گھر فراہم کرنے آ رہے ہیں، وزیراعظم عوامی فلاح سے جڑے ہر منصوبے میں متحرک نظر آئیں گے۔ فروس عاشق اعوان نے کہا ہے کہ وزیراعظم نے نظام کی تبدیلی کا وعدہ کیا ہے، پنجاب میں لینڈ اینڈ ریونیو ڈیپارٹمنٹ کو ازسرنو تشکیل دے رہے ہیں،پٹواری نظام کو ختم کر کے ٹیکنالوجی کی مدد لی جا رہی ہے اور اس سال کے آخر تک 8ہزار اراضی کو کمپیوٹرائزڈ کر دیا جائے گا، ای سٹیمپ اور ای پیچ میں سہولیات کو بھی فروغ دیا جا رہا ہے۔جمعرات کو معاون خصوصی برائے اطلاعات پنجاب ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان نے لاہور میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ وزیراعظم نے قوم سے نظام بدلنے کا وعدہ کیا ہے اور ان کے تبدیلی کے سفر پر چلتے ہوئے پنجاب میں لینڈ اینڈ ریونیو ڈیپارلیمنٹ میں تبدیلی کی گئی ہے اور پٹواری نظام کو بدلنے کیلئے جدید ٹیکنالوجی سے استفادہ کیا جا رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ صوبے میں اراضی ریکارڈ سینٹر قائم کئے جا رہے ہیں، اراضی ریکارڈ سینٹر سے عوام کو سہولت فراہم ہو گی، آٹھ ہزار اراضی ریکارڈ سینٹر کو سال کے آخر تک کمپیوٹرائزڈ کر دیا جائے گا۔ معاون خصوصی نے کہا کہ ای سٹیمپ کے جدید سسٹم سے کرپشن میں نمایاں کمی ہوئی ہے اور ای پیچ سسٹم کے ذریعے لوگ سرکاری نرخ پر سٹام پیپر حاصل کر سکیں گے۔ انہوں نے کہا کہ کرپشن کے خاتمے کیلئے نظام میں تبدیلیاں ضروری ہیں جبکہ ڈیجیٹلائزیشن کے نظام سے بدعنوانیوں کا خاتمہ ممکن ہو گا۔(اح+م ا)

فردوس عاشق

مزید :

صفحہ اول -