ڈاکٹر طاہرالقادری کے معاملے پر کینیڈین حکومت سے رابطہ کریں گے : رانا مشہود

ڈاکٹر طاہرالقادری کے معاملے پر کینیڈین حکومت سے رابطہ کریں گے : رانا مشہود
ڈاکٹر طاہرالقادری کے معاملے پر کینیڈین حکومت سے رابطہ کریں گے : رانا مشہود

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک ) وزیر قانون پنجاب رانا مشود احمد نے کہا ہے کہ کینیڈین حکومت سے کہیں گے کہ یا وہ خود اپنے شہری طاہر القادری کےخلاف کارروائی کرے یا اسکی شہریت منسوخ کی جائے۔صوبائی دارلحکومت میں پریس کانفرنس کے دوران صوبائی وزیر قانون کا کہنا تھا کہ کینیڈا سے ایک غیر ملکی ایجنٹ پاکستان میں آیا ہے، بیرونی اشاروں پر چلنے والوں کےلئے ملک میں کوئی جگہ نہیں ہے ،صوبائی حکومت اب وفاقی حکومت کو کینیڈین حکومت کو خط لکھنے کی درخواست کررہی ہے جس میں کہا جائےگا کہ انکا شہری ہمارے ملک میں انتشار پھیلارہا ہے، یا تو وہ خود اپنے شہری کے خلاف کارروائی کرے یا اس کی شہریت منسوخ کی جائے۔ ان کا کہنا تھا کہ یوم شہدا کے ایصال ثواب کے لئے قرآن خوانی گھروں میں بھی ہوسکتی ہے لیکن یہ لوگ قرآن خوانی کےلئے نہیں آرہے بلکہ درحقیقت یہ لوگ دہشتگرد ہیں، لاہور آنےوالے 17 قافلوں سے اسلحہ برآمد ہوا ہے، طاہر القادری خود اپنے کارکنوں کو ڈنوں اور لاٹھیوں میں کیلیں ٹھونکنے کا کہہ چکے ہیں۔رانا مشہود کا مزید کہنا تھا کہ آئین طاقت سے حکومت ختم کرنے کی اجازت نہیں دیتا،انتشار پھیلانے والے دنیا بھرمیں پاکستان کو بدنام کررہے ہیں، پنجاب کے مختلف شہروں میں ہونے والی ہنگامہ آرائی کے دوران 300 سے زائد پولیس اہلکاروں کو زخمی کردیا گیا ہے اور عوامی تحریک کے کارکنوں نے طاہرالقادری کی ایما پر ہنگامہ آرائی کی، جب سرعام پولیس اہلکاروں کو اغوا کیا جائے تو حکومت کی ذمہ داری بنتی ہے کہ وہ اپنی رٹ قائم کرے، پولیس شرپسندوں سے نمٹنے کےلئے تیارہے لیکن اہلکار تحمل اورصبر کا مظاہرہ کررہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ پنجاب کے مختلف علاقوں میں ہنگامہ آرائی کے باعث راستے بند ہونے کی وجہ سے پٹرول کی سپلائی وقت پر نہیں پہنچ سکی لیکن آئندہ چند گھنٹوں میں پیٹرولیم مصنوعات کی قلت ختم کردی جائے گی۔