بین الاقوامی بینک کا مسلمانوں کے خلاف متعصب اقدام

بین الاقوامی بینک کا مسلمانوں کے خلاف متعصب اقدام
بین الاقوامی بینک کا مسلمانوں کے خلاف متعصب اقدام

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

لندن (نیوز ڈیسک) دنیا کا بڑابینک ہونے کا دعویٰ کرنے والے HSBC نے بدترین نسلی امتیاز کا مظاہرہ کرتے ہوئے برطانیہ میں مقیم شامی پناہ گزینوں اور طلباءکو اکاﺅنٹ بند کرنے کا نوٹس بھیج دیا ہے۔ یہی بینک اس سے پہلے برطانیہ کے اہم مسلم اداروں، شخصیات اور منزبری پارک لندن کی مسجد کا اکاﺅنٹ بھی بند کرچکاہے۔ محمد اثرب نامی ایک شامی شہری نے بتایا کہ اس کا کااﺅنٹ 2006ءسے HSBC میںقائم تھا اور اب اسے بند کردیا گیا ہے۔ جب اس نے بینک کو بتایا کہ اس نے کوئی غیر قانونی کام نہیں کیا ہے اور شام سے تعلق ہونا کوئی جرم نہیں ہے تو بینک کا کہنا تھا کہ بینک نے مکمل جائزہ لینے کے بعد ان کا اکاﺅنٹ بند کیا ہے۔ متاثرین کا کہنا ہے کہ شامی پناہ گزینوں کے ساتھ ظالمانہ سلوک کیا جارہا ہے اور پہلے سے مصائب کا شکار مسلمانوں کے اکاﺅنٹ بند کرنا ان کی پیٹھ میں چھرا گھونپنے کے مترادف ہے۔ چھبیس سالہ طالب علم ماجد نے بتایا کہ اس کے مسلمان اور شامی ہونے کی وجہ سے اس کا اکاﺅنٹ بند کردیا گیا ہے جس کی وجہ سے اسے اپنے تعلیمی اور دیگر اخراجات کا بندوبست کرنے میں شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑرہا ہے۔ بینک متعدد مسلمان شامیوں کو نوٹس بھیج رہا ہے کہ وہ دو ماہ کے اندر کوئی اور بینک ڈھونڈلیں۔

مزید :

بزنس -