جنوبی لاہور میں ٹرنک سیوریج کی سہولت کا جائزہ لینے کیلئے کمیٹی کا اجلاس

جنوبی لاہور میں ٹرنک سیوریج کی سہولت کا جائزہ لینے کیلئے کمیٹی کا اجلاس

لاہور (پ ر) جنوبی لاہور میں ٹرنک سیوریج کی سہولت کا جائزہ لینے کیلئے حکومت پنجاب کی مقرر کردہ کمیٹی کا اجلاس زیر صدارت سیکرٹری کوآپریٹوز پنجاب شہر یار سطان منعقد ہوا۔ جس میں ممبر صوبائی اسمبلی ملک سیف الملوک کھوکھر، ممبر صوبائی اسمبلی شہبازاحمد چیئرمین واسا، رجسٹرار کوآپریٹوز پنجاب چودھری محمد نواز ،ڈسٹرکٹ گورنمنٹ لاہور، ایل ڈی اے، واسا، ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن، ویسٹ مینجمنٹ، محکمہ امداد باہمی کے افسران اور کوآپریٹو ہاؤسنگ سوسائٹیز کے نمائندگان نے شرکت کی۔ جس میں رائے ونڈ روڈ اور کینال بینک روڈ پر ڈالے جانے والے ٹرنک سیوریج کے کام کا جائزہ لیا گیا۔ اس موقع پر بتایا گیا کہ اس پراجیکٹ پرنیسپاک کی تیار کردہ رپورٹ کے مطابق 16290 ملین روپے کے اخراجات آئیں گے اور تین لاکھ 38 ہزار 800 کینال رقبہ کارہائشی علاقہ اس سے استفادہ کرے گا۔ جس میں 30 فیصد حصہ کوآپریٹو ہاؤسنگ سوسائٹیز اور پرائیویٹ ہاؤسنگ سکیموں کا ہے اجلاس میں پرائیویٹ اور کوآپریٹو ہاؤسنگ سوسائٹیز سے ٹرنک سیوریج کے اخراجات کی وصولی کا بھی جائزہ لیا گیا اس موقع پر بتایا گیا کہ کوآپریٹو ہاؤسنگ سوسائٹیز نے سال 2014-15ء میں 26 کروڑ 70 لاکھ 67 ہزار 340 روپے ٹیکس کی مد میں حکومت کو ادا کیے اس حوالے سے اجلاس میں موجود کوآپریٹو ہاؤسنگ سوسائٹیز ایسوسی ایشن کے نمائندگان نے کہا کہ کوآپریٹو ہاؤسنگ سوسائٹیز سالانہ کروڑوں روپے ٹیکس کی مد میں حکومت کو ادا کرتی ہے لیکن حکومت کوآپریٹو ہاؤسنگ سوسائٹیز میں ترقیاتی کام نہیں کرواتی۔ انہوں نے حکومت نے مطالبہ کیا کہ کوآپریٹو ہاؤسنگ سوسائٹیز سے اگر ٹیکس وصول کیا جاتا ہے تو سوسائٹیز میں ترقیاتی کام بھی کروائے۔ سیکرٹری کوآپریٹوز پنجاب نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ حکومت عوام کا معیار زندگی بلند کرنے اور انہیں بہترین رہائشی سہولیات فراہم کرنے پر عمل پیرا ہے۔ جنوبی لاہور میں اربوں روپے کی لاگت سے ٹرنک سیوریج بچھانا حکومت کا بڑا کارنامہ ہے۔ اس منصوبہ کے مکمل ہونے سے ان علاقوں کو سیوریج کی بہترین سہولت میسر ہوگی جس سے یہ علاقہ عرصہ دراز سے محروم تھا۔

انہوں نے کہا کہ ان اخراجات کا زیادہ حصہ حکومت پنجاب خود برداشت کر رہی ہے۔

مزید : کامرس