سانحہ کوئٹہ، بار کونسل کی اپیل عدالتی کارروائیوں کا بائیکاٹ

سانحہ کوئٹہ، بار کونسل کی اپیل عدالتی کارروائیوں کا بائیکاٹ

کراچی (اسٹاف رپورٹر)بلوچستان بار ایسوسی ایشن کے صدرانور کانسی کی ٹارگٹ کلنگ اور سول اسپتال کوئٹہ میں ہونے والے بم دھماکے میں وکلا ء سمیت50سے زائد شہریوں کے جاں بحق ہونے کے خلاف سندھ بار کونسل کی اپیل پر سندھ بھر میں عدالتی کارروائیوں کے بائیکاٹ اور دو روزہ سوگ کا اعلان کیا گیا ہے ۔تفصیلات کے مطابق بلوچستان میں دہشتگردوں کی فائرنگ کے نتیجے میں بلوچستان بار کے صدر انور کانسی کی شہادت اورکوئٹہ کے سول اسپتال بم دھماکے کے باعث 50سے زائد افراد کے جاں بحق ہونے پر سندھ بار کونسل کی اپیل پر پیر کو سندھ بھر میں عدالتی کارروائیوں کا بائیکاٹ کیا گیا ۔اس دوران وکلاء عدالتوں میں پیش نہیں ہوئے ۔کراچی بار اور ملیر بار کی جانب سے شہید ہونے والے وکلا کے لیے دعائے مغفرت کی گئی ۔سندھ بارکونسل نے سانحہ کوئٹہ پر دو روزہ سوگ منانے کا اعلان کیا ہے ۔ اس موقع پر وکلا ء رہنماؤں نے کہا کہ اس طرح کے بم دھماکے ملکی سا لمیت کیلئے خطرہ ہیں۔وکلا کو ٹارگٹ کلنگ کا نشانہ بنایا جا رہا ہے۔ بار بار انتظامیہ کی توجہ اس طرف دلائی گئی کہ ججز اور وکلا کا تحفظ فراہم کیا جائے، لیکن انتظامیہ کی جانب سے کچھ نہیں کیا گیا۔انہوں نے کہا کہ اگر وکلا اور ججز کو تحفظ فراہم نہیں کیا گیا تو وکلا ہڑتال کریں گے انہوں نے کہا کہ بلوچستان واقعے میں ملوث ملزمان کو فوری طورپر گرفتار کیا جائے ۔دریں اثناء کوئٹہ بم دھماکے کے بعد سندھ ہائی کورٹ کی سیکیورٹی میں اضافہ کر دیا گیا.ہے ۔

مزید : کراچی صفحہ اول