غریب شہریوں پر ظلم ڈھانیوالے واپڈا اہلکاروں کا محاسبہ کیا جائیگا :عابد شیر علی

غریب شہریوں پر ظلم ڈھانیوالے واپڈا اہلکاروں کا محاسبہ کیا جائیگا :عابد شیر ...

واہ کینٹ (نمائندہ پاکستان ) وفاقی وزیر مملکت پانی و بجلی عابد شیر علی ، واپڈا کی غفلت کے باعث بجلی کابھاری بھرکم بل موصول ہونے پر خود کشی کرنے والے ٹیکسلا کے شہری کے گھر پہنچ گئے،بیوہ سے داد رسی کی اور خود کشی کرنے والے شخص کے لئے دعائے مغفرت کی ،وزارت کی جانب سے متاثرہ خاندا کے لئے مالی معاونت کا اعلان ،غفلت برتنے پر واپڈا ٹیکسلا بلنگ ڈیپارٹمنٹ کے ساتھ اہلکار معطل ، مقدمہ کے ادراج کے لئے ڈی ایس پی ٹیکسلا سرکل ساجد گوندل کو فوری کاروائی کا حکم دے دیا،اپنے دورہ ٹیکسلا کے دوران متاثرہ خاندان سے اظہار تعزیت کیا ، میڈیا سے گفتگو کے دوران وزیر مملکت پانی و بجلی عابد شیر علی کا کہنا تھا کہ غریب شہریوں پر ظلم کا پہاڈ ڈھانے والے محکمہ واپڈا میں موجود غنڈوں کا بھرپور محاسبہ کیا جائے گا،جن کے ظلم و زیادتی کی بناپر کئی خاندان برباد ہوچکے ہیں،جبری دہشتگردی کا خاتمہ اپنے محکمہ سے کریں گے،انکا کہنا تھا کہ محکمہ میں موجود کالی بھیڑوں اور کرپٹ عناصر کے ساتھ کسی قسم کی رعائت نہیں برتی جائے گی، ان افراد کو جیلوں میں ڈالیں گے،محکمانہ ظلم وستم کو ختم کریں گے،انھوں نے بتایا کہ یہ انکی سرپرائز وزٹ ہے، جس کی بنیادی وجہ ٹیکسلا کے شہری کی خود کشی کا دل ہلا دینے والا سانحہ ہے جو بجلی کے بھاری بل اوور بلنگ کے باعث اس دنیا سے چلا گیا،ان لوگوں کو ہتھکڑیاں لگیں گی یہ لوگ جیلوں میں جائیں گے،انکا کہنا تھا کہ ہم مظلوموں کی آو از ہیں ،محکمہ سے غنڈہ گردی کا خاتمہ کر کے دم لیں گے،ان کہنا تھا کہ جو لوگ بھی اوور بلنگ کر رہے ہیں انھیں کسی صورت معاف نہیں کیا جائے گا نا جانے کتنے خاندان انکے عتاب کا نشانہ بن چکے ہیں،انکا کہنا تھا کہ متاثرہ خاندان سے تعلق رکھنے والے افراد کی کفالت کی ذمہ داری آئیسکو کی ہوگی،ان کہا کہنا تھا کہ جن جن شہریوں کے ساتھ زیادتی ہوئی ہے انکا بھرپور ازالہ کیا جائے گا،یاد رہے کہ چند روز قبل ٹیکسلا کے ایک کسان ارشد ولد علی محمد جو کہ حاجی سعید اختر کی دس کنال زمین پر کاشتکاری کرتا تھا زرعی ٹیوب ویل کے میٹر کے360یونٹ کابجلی بل واپڈا نے ایک لاکھ چار ہزار بھیج دیا ،متوفی نے واپڈا آفس سے رابطہ کیا اور کئی بار چکر لگانے کے باوجود بل درست نہ کیا گیا ایک کلرک سے لیکر ایکسئین تک متوفی نے رسائی حاصل کی مگر بل پھر بھی درست نہ ہوا الٹا واپڈا اہلکاروں نے بجلی کا بل درست کرنے کے لئے رشوت مانگ لی، ارشد محمود جوکہ پہلے ہی غربت کی وجہ سے سخت پریشان تھااس نے دلبرداشتہ ہو کر گھر میں موجود فصلوں پر سپرے کی جانے والی کیڑے مار دواپی لی جب اسکی حالت غیر ہونے لگی تو اسے فوری طور پر کرسچین ہسپتال لایا گیا جبکہ بعد ازاں حالت بگڑنے پر اسے ڈسٹرکٹ ہسپتال راولپنڈی پہنچایا گیا جہاں وہ ایک دن موت و حیات کی کشمکش میں مبتلا رہنے کے بعد چل بسا ، ادہر خبروں کی اشاعت کے بعد وزیر مملکت پانی و بجلی عابد شیر عی نے اسکا نوٹس لے لیا واپڈا کے عتاب کا نشانہ بننے والے ارشد کے گھر واقع ریلوے پھاٹک نذد چمڑہ کارخانہ پہنچ گئے،اور بیوہ سے اظہار تعزیت کیا اور متاثرہ خاندان کی مکمل مالی معاوت کا اعلان کیا،بعد ازاں وزیر مملکت ڈی ایس پی ٹیکسلا سرکل ساجد گنودل کے دفتر پہنچ گئے جہاں انھوں نے غفلت برتنے والے واپڈا بلنگ ڈیپارٹنت کے اہلکاروں کے خلاف فوری مقدمہ کے اندراج کا حکم دیا ، وہاں موجود شہریوں نے انھیں بتایا کہ یہاں رشوت کا بازار گرم ہے مٹھی گرم کرنے پر کام ہوتے ہیں جس پر وزیر مملکت پانی و بجلی عابد شیر علی نے واپڈا ٹیکسلا کے 7 ذمہ داران اہلکاروں کو فوری معطل کرنے کا حکم دیا،وزیر مملکت پانی و بجلی کی ٹیکسلا آمد پر واپڈا کے اہلکاروں میں خوف کی فضا پھیل گئی ہر کوئی اپنی جان خلاصی کے لئے متحرک نظر آرہا تھا،واپڈا کے ستائے ہوئے شخص نے زہریلی دوا پی کر اپنی زندگی کا خاتمہ کر لیا، متوفی کو واپڈا کی جانب سے بھاری بل موصول ہوا بار بار واپڈا کے چکر لگائے مگر شنوائی نہ ہوئی دلبرداشتہ ہو کر زندگی کا خاتمہ کر لیا متوفیاں کی چھوٹی چھوٹی بچیاں ہیں، ٹیکسلا کا کسان ارشد ولد علی محمد جو کہ حاجی سعید اختر کی دس کنال زمین پر کاشتکاری کرتا تھا زرعی ٹیوب ویل کے میٹر کے360یونٹ کابجلی بل واپڈا نے ایک لاکھ چار ہزار بھیج دیا ،متوفی نے واپڈا آفس سے رابطہ کیا مگر کئی کئی بار چکر لگانے کے باوجود بل درست نہ کیا گیا ایک کلرک سے لیکر ایکسئین تک متوفی نے رسائی حاصل کی مگر بل پھر بھی درست نہ ہوا الٹا واپڈا اہلکاروں نے بجلی کا بل درست کرنے کے لئے رشوت مانگ لی، ارشد محمود جوکہ پہلے ہی غربت کی وجہ سے سخت پریشان تھااس نے دلبرداشتہ ہو کر گھر میں موجود فصلوں پر سپرے کی جانے والی کیڑے مار دواپی لی جب اسکی حالت غیر ہونے لگی تو اسے فوری طور پر کرسچین ہسپتال لایا گیا مگر حالت بگڑنے پر اسے سول ہسپتال راولپنڈی پہنچایا گیا جہاں وہ ایک دن موت و حیات کی کشمکش میں مبتلا ہونے کے بعد چل بسا ،متوفی کی چھوٹی چھوٹی بچیاں ہیں، واضع رہے کہ ہر ماہ واپڈا کی جانب سے اؤور بلنگ کی جاتی ہے اور یک سو سے لیکر دو سو یونٹ تک کا بل چار تاچھ ہزار صارفین کو ملتا ہے اور صارفین ہر ماہ بل درست کرانے جاتے ہیں جبکہ دن میں آٹھ گھنٹے بجلی ہوتی نہیں اور صارفین کو ہزاروں روپے اضافی ڈال دئیے جاتے ہیں متوفی ارشد محمود کو مقامی قبرستان میں سپرد خاک کر دیا گیا غریب کاشتکار کی چھوٹی چھوٹی بچیاں اور بیوہ کا سہارا چھن گیا۔آج وزیر مملکت عابد شیر علی نے ٹیکسلا میں وپڈا آفس میں چھاپہ مار کر وپڈا ملازمین کی دوڑیں لگادی سب سے پہلے وہ ارشد ولد علی محمد کے گھر گئے اور اس کی اہلیہ سے افسوس کیا اور اور وہاں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے انھوں نے کہا ہے کہ ملازمین کی نااہلی کسی صورت برداشت نہیں کی جائے گئی غفلت برتنے والوں کے خلاف فوری کاروائی عمل میں لائی جائے گی ۔ان کے خلاف میں خود ایف آئی آر درج کروا کر جاوں گااوربلنگ ظلم وزیادتی کسی صورت برداشت نہیں کریں گئے اور بلنگ کی وجہ سے یہ حادثہ پیش آیا ہے واپڈہ اہلکاروں کی یہ کھلی دہشت گردی ہے ان کی غنڈہ گردی اور غفلت کی وجہ سے یہ حادثہ اور ایسے کئی حادثات رونماء ہوچکے ہیں اور سینکڑوں خاندان ایسے حادثات کا شکار ہوچکے ہیں ہم ان مظلوموں کی آواز بن کر انھیں انصاف فراہم کر یں گے اور مظلوم خاندان کی داد رسی کریں گے اس واقعہ کے ذمہ داران کے خلاف ایف آئی آر کاٹی جائے گی ان کے خلاف مقدمہ کریں گئے استغاثہ ہماری طرف سے جائے گا کرپٹ مافیاکو ہتھکڑیاں لگائے گئے اس موقع پر وفاقی وزیر بجلی پانی عابد شیر علی نے میڈیا اور ارشد محمود کی بیوہ اور اہل علاقہ سے اظہار کرتے ہوئے کیا انھوں نے کہا ہے کے چند روز میں ٹیکسلا میں وپڈہ کے حوالے سے کھی کچری لگاوں گا عرصہ دراز سے تعینات ملازمین کے خلاف سخت کاروئی عمل میں لائی جائی اس موقع پر ٹیکسلا کی معروف سیاسی شخصیت باوا وزیر سلطان ،ڈاکٹر رمضان عبداللہ ،ملک فضل خان،حاجی سلیم ،ڈاکٹر صابر ،حا جی ملک جاوید،امجد چوہدری،طاہر فریدون کے علاوہ معززین علاقہ موجود تھے ارشد ولد علی محمدکے گھر سے وفاقی وزیر تھانہ ٹیکسلا پہنچے اور ڈی ایس پی ساجد گوند ل سے ملاقات کرتے ہوئے اس کی بیوہ کی مدعیت میں فوری ایف آئی آر درج کرنے کا حکم جاری کیا اور غفلت برتنے والے ایک ملزم شاہد محمود لائن سپریڈینٹ کو فوری طور پر خود پولیس کی حراست میں دیا ایس ڈی او واپڈا کو وارننگ کے ساتھ 7دیگر واپڈا کے ملازمین کو معطل کر دیا گیا غفلت برتنے والا ایک اور ملازم موقع سے فرار ہونے میں کامیاب ہو گیا

مزید : کراچی صفحہ اول