صحافت کی آڑ میں منشیات فروشی ہرگز برداشت نہیں ،ناظمین تحصیل بریکوٹ

صحافت کی آڑ میں منشیات فروشی ہرگز برداشت نہیں ،ناظمین تحصیل بریکوٹ

بریکوٹ (نمائندہ پاکستان) صحافت کی اڑ میں بعض صحافی منشیات فروشی سمیت کالا دھندہ کر رہے ہیں جو ہر گز برداشت نہیں کرینگے،بریکوٹ پریس کلب مذکورہ صحافی کی ممبر شپ فوری طور پر ختم کریں ورنہ متحدہ اتحاد وی سی ناظمین تحصیل بریکوٹ تمام صحافیوں کو ان کا سہولت کار سمجھیں گے اور بریکوٹ پریس کلب کے تمام صحافیوں سے بائیکاٹ کرینگے ‘ ان خیالات کا اظہار آل ناظمین تحصیل بریکوٹ کے چیئرمین میاں فضل ودود باچا ، وائس چیئرمین واجد خان سمیت سماجی شخصیات نے پر ہجوم ہنگامی پریس کانفرنس کرتے ہوئے کیا ‘ انہوں نے کہا کہ بریکوٹ پولیس نے منشیات فروشوں کے خلاف جو پکڑ دھکڑ شروع کی ہے ہم اس کی حمایت کرتے ہیں اور پولیس کے اعلیٰ حکام سے پُرزور مطالبہ کرتے ہیں کہ منشیات فروش سماج دشمن کے زمرے میں آتے ہیں ان کے خلاف سخت کاروائی کریں اور جو پریس کانفرنس منشیات فروشوں نے سوات پریس کلب میں کی ہے وہ غلط بیانی پر مبنی ہے ‘ انہوں نے کہا کہ جو چھاپہ مارا گیا ہے وہ بالکل ٹھیک ہے اور ہم اس پر پولیس کو خراج تحسین پیش کرتے ہیں ‘ مبینہ ملزمان کے خلاف عدالت میں 46ایف ائی ار موجود ہیں اسکے باوجود محترم عدالت عالیہ اسکو چھوڑ دیتے ہیں جس کی وجہ معلوم نہیں ‘ انہوں نے کہا کہ تحصیل بریکوٹ کے تمام بچے اور نوجوان نسل بری طرح منشیات کا استعمال کررہے ہیں جوا س علاقے کے لئے تباہی ہے اور ہم یہ برداشت نہیں کرسکتے ‘ انہوں نے کہا کہ بریکوٹ پریس کلب سمیت کئی اداروں کو ہم نے درخواستیں دیے رکھیں ہیں کہ سماج دشمن عناصر کیسے صحافی ہوسکتا ہے اور صحافت کی آڑ میں کالا دھندہ کھلے عام کررہا ہے اور عوام کی انکھوں میں دھول جھونک رہا ہے ‘ میاں فضل ودود باچا نے اس بات پر زور دیتے ہوئے کہا کہ بریکو ٹ پریس کلب کے صدر ہمارے درخواست پر عمل کرتے ہوئے صحافی معراج الدین کے ممبر شپ کوفوری طور پر ختم کریں ورنہ ہم تمام صحافیوں کا بائیکاٹ کرینگے‘ انہوں نے کہا کہ تمام پولیس اہلکارمنشیات فروشوں اور سماج دشمن عناصر کے خلاف بلا تفریق ایکشن لیں جو پولیس افسر یا اہلکار منشیات فروشوں کی مدد کرتا ہو ہم ان کے خلاف بھی سڑکوں پر ائینگے‘ انہوں نے کہا کہ بریکوٹ میں 96 فیصد لوگ تعلیم یافتہ ہے لیکن منشیات کی وجہ سے تعلیم کی شرح متاثر ہورہی ہے ‘ انہوں نے حکام بالا ، محکمہ پولیس کے اعلیٰ افسران ، ضلعی انتظامیہ، سیکورٹی ایجنسیاں سمیت پاک فوج سے اپیل کی کہ وہ سماج دشمن عناصر کے خلاف سخت کاروائی کریں ۔

مزید : پشاورصفحہ آخر