دریائے چناب میں اونچے درجہ کا سیلاب ،فلڈ ایمرجنسی نافذ ،ریلا 2دن بعد ملتان سے گزرے گا

دریائے چناب میں اونچے درجہ کا سیلاب ،فلڈ ایمرجنسی نافذ ،ریلا 2دن بعد ملتان ...

ملتان ‘ خانیوال ‘ مظفر گڑھ ‘ کوٹ ادو ‘ عبدالحکیم ‘ احمد پور سیال ‘ رحیم یار خان ‘ علی پور ( سپیشل رپورٹر ‘ خبر نگار ‘ نمائندگان ) ملتان سے سپیشل رپورٹر ‘ خبر نگار کے مطابق دریائے چناب میں اونچے(بقیہ نمبر13صفحہ12پر )

درجہ کا سیلابی ریلہ قادر�آباد ہیڈ ورکس سے گزرتاہوا تریموں ہیڈ ورکس کی جانب بڑھنے لگا ،شدت تین لاکھ کیوسک رہ گئی ، محکمہ آبپاشی کے جاری کردہ اعداد وشمار کے مطابق دریائے چناب میں گزشتہ شب مرالہ کے مقام پر پانی کی آمد پانی کی آمد125328کیوسک،اخراج113028کیوسک خانکی کے مقام پر آمد 142648کیوسک،اخراج 135148کیوسک ،قادر آباد ہیڈ ورکس پر پانی کی آمد 310347کیوسک ،اخراج302026کیوسک جبکہ تریموں کے مقام پرپانی کی آمد 85442کیوسک جبکہ پانی کا اخراج 72242کیوسک ریکارڈ کیا گیا ہے ۔محکمہ آبپاشی کے ذرائع کے مطابق مذکورہ سیلابی ریلہ آئندہ 48گھنٹوں میں ملتان اور مظفرگڑھ کی حدود میں داخل ہوگا جس کیلئے حفاظتی انتظامات جاری ہیں مذکورہ ریلے سے فلڈ بندوں کو کوئی خطرہ نہیں تاہم دریائی بیٹ کے علاقے زیر آب آئیں گے جن میں رہائش پذیر لوگوں کو فوری طور پر محفوظ مقامات پر منتقل ہونے بارے اعلانات کرائے جارہے ہیں تاہم دوسری جانب ضلعی انتظامیہ کے ذرائع کے مطابق ضلعی حکومت طے شد ہ حکمت عملی کے تحت در یا ئے چنا ب پر مختلف مقا ما ت پر 20 فلڈ ریلیف کیمپ لگا ئے گی جو آ ج برو ز منگل تک مکمل فعا ل کر دئیے جا ئیں گے ۔ فلڈ ریلیف کیمپ میں میڈ یکل کیمپ ،لا ئیو سٹا ک ،ریسکیو،سول ڈ یفنس اور تما م متعلقہ محکموں کے کیمپ لگا ئے جائیں گے تا کہ اپنا گھر با ر چھو ڑ کر ان خیمو ں میںآ با د ہو نے وا لو ں کو کو ئی تکلیف نہ ہو ۔ جبکہ پا ک فوج اور پولیس کی مدد سے دریا ئی علا قو ں میں بسنے وا لے افرا د کو نقل مکا نی کرا نے کا عمل شروع کر دیا گیا ہے۔ ڈسٹرکٹ کوآرڈی نیشن آفیسر و ایڈمنسٹریٹر سٹی ڈسٹرکٹ گورنمنٹ ملتان نادر چٹھہ نے ضلع ملتا ن میں فلڈ وارننگ جا ر ی کر تے ہو ئے ضلعی وریسکیو ادا رو ں کو ہا ئی الر ٹ کر دیا ہے ۔ ۔ان خیا لا ت کا اظہا ر انہو ں نے گزشتہ روز ڈ ی سی او آ فس میں منعقد ہ ممکنہ سیلا ب سے بچا ؤ کیلئے اجلاس کی صدا ر ت کر تے ہوئے کیا ۔ایڈ یشنل ڈسٹر کٹ کلکٹر منظر جا وید علی اور ڈسٹر کٹ آ فیسر کوآرڈی نیشن زاہد اکرام سمیت تما م ضلعی افسرا ن بھی اس موقع پر موجود تھے ۔ڈ ی سی او نادر چٹھہ نے خطا ب کر تے ہوئے کہا کہ حالیہ با ر شو ں اور بھار ت کی جا نب سے پا نی چھو ڑ ے جا نے کے با عث سیلاب کا خطر ہ پیدا ہو گیا ہے ۔حکو مت پنجاب نے ملتا ن سمیت 14 شہرو ں میں فلڈ ایمر جنسی نا فذ کر نے کے احکا ما ت دئیے ہیں ۔انہو ں نے کہا کہ حکو مت پنجا ب کی جانب سے وافر مقدار میں ادویا ت ،ویکسی نیشن ،کشتیاں اور دیگر امدادی سا ما ن مو صو ل ہو چکا ہے ۔اجلا س میں بر یفنگ دیتے ہوئے متعلقہ محکمو ں کے نمائندو ں نے بتا یا کہ اکبر فلڈ بند ، بند بو سن، شیر شا ہ اور شجا ع آ با د سمیت مخصوص مقا ما ت پر فلڈ ریلیف کیمپ لگا دئیے گئے ہیں جہا ں تما م ضرو ر ی امدا د ی سا مان پہنچا دیا گیا ہے ۔ ڈی سی او ملتان کے حکم پر چاروں ٹاؤنسز نے سیلاب کے خطرے کے پیش نظر ریلیف کیمپ لگانا شروع کر دئیے ہیں ۔ ذرائع کے مطابق یہ کیمپ محمد پور گھوٹہ موضع لنگڑیال میں لگائے جا رہے ہیں ۔ بتایا گیا ہے کہ پنجاب ڈیزاسٹر منیجمنٹ اتھارٹی کی طرف سے فلڈ وارننگ جاری ہونے کے بعد سٹی ڈسٹرکٹ گورنمنٹ ملتان نے تمام محکموں کو ہائی الرٹ کر دیا ہے ۔ بتایا گیا ہے کہ ٹاؤنز نے رمضان بازاروں میں استعمال ہونے والا سامان ان علاقوں میں پہنچانا شروع کر دیا ہے ۔ خانیوال سے نمائندہ پاکستان کے مطابق حکومت پنجاب نے صو بے بھر کے 36اضلاع کی ضلعی انتظامیہ سے ممکنہ سیلا ب کے پیشِ نظر صوبے بھر کی ضلعی انتظامیہ سے سیلا ب کے دوران استعما ل ہونے والی مشینری کی تفصیلات اور انکے فٹنس سرٹیفکیٹ طلب کر لئے ہیں۔ عبدالحکیم سے نمائندہ خصوصی کے مطابق دریا چناب نے کنڈ سرگانہ کے مقا م پر تیزی سے کٹاو شروع کر دیا ہے کٹاو کی وجہ سے سینکڑوں ایکڑ زرعی اور قیمتی رقبہ دریا برد ہو چکا ہے تاریخی جہانہ بنگلہ بھی دریا برد ہو چکا ہے اب روزانہ کئی کئی ایکڑ زمین کٹاوکی وجہ دریا برد ہو رہی ہے، ابھی اطلاعات آرہی ہیں کہ انڈیا نے چناب میں چار لاکھ کیوسک پانی چھوڑ دیا ہے ، جو یہاں پانچ چھ روز تک پہنچے گا ، کنڈ سرگانہ سے بننے والے سابق ممبر پنجاب اسمبلی حاجی جعفر حسین سرگانہ نے کنڈ سرگانہ کو سیلاب اور دریا کے کٹاو سے بچانے کے لئے کروڑوں روپے کی لاگت سے حفاظتی بند کے علاوہ پتھر بھی ڈالہ جارہا ہے تاکہ کٹاؤ کے عمل کو روکا جاسکے۔ ڈی سی او مظفرگڑھ شوکت علی نے کہا ہے کہ متوقع سیلاب 2014کے سیلاب سے تقریباً آدھا ہے ، جو ضلعی حدود سے تیزی سے گزر جائے گا، جس کا دورانیہ 10سے 12گھنٹے ہوگا، انہوں نے کہا کہ اس سیلاب سے ضلعی کی اراضی سیراب ہوگی جس کے بہت سے فوائد ہوں گے۔ مظفر گڑھ ‘ کوٹ ادو سے سپیشل رپورٹر کے مطابق بالائی علاقوں میں مون سون کی بارشیوں کی باعث دریائے چناب میں پانی کی سطح میں اضافہ ہورہا ہے ، مرالہ کے مقام پر پانی کی سطح 3لاکھ93ہزار کیوسک نوٹ کی گئی ہے، مظفرگڑھ کی حدود میں یہ پانی ہیڈ محمدوالا کے مقام پر 12اگست تک پہنچے گا یہ بات ڈی سی اومظفرگڑھ شوکت علی نے میڈیا کو سیلاب کے سلسلے میں بریفنگ دیتے ہوئے کہی، اس موقع پر ایکسین آبپاشی زاہد حسین اور اے سی مظفرگڑھ ڈاکٹر سیف اللہ بھٹی بھی ان کے ہمراہ تھے، ڈی سی او نے بتایا کہ 10اگست کو یہ پانی کا ریلہ ہیڈ تریموں سے گزرے گا ۔120سے130مواضعات زیر آب آنے کا خدشہ ہے، جہاں سے آبادی کے اخراج کیلئے وارننگ جاری کردی گئی ہے ، متاثریں کیلئے 23ریلیف کیمپ قائم کردئیے گئے ہیں ۔ اس موقع پر ایکسین آبپاشی زاہد حسین نے بتایا کہ پانی کا یہ ریلہ 10اگست کو ہیڈ تریموں سے گزرے گا جہاں یہ 3لاکھ 25ہزار کیوسک ہوگا، 12اگست کو ہیڈ محمدوالا سے گزرے گا جہاں یہ 2لاکھ 85ہزار کیوسک ہوگا، شیر شاہ کے مقام پر یہ 1لاکھ 90ہزار کیوسک سے2لاکھ10ہزارکیوسک تک ہوگا جبکہ ہیڈ پنجند کے مقام پر یہ صرف 1لاکھ 80ہزار ہوگا۔ احمد پور سیال سے نامہ نگار کے مطابق وزیر اعلیٰ پنجاب کی ہدایات پر تحصیل احمد پور سیال میں چار فلڈ ریلیف سینٹر کیمپ قائم کر دئیے گئے ہیں ۔ان خیالات کا اظہار ویٹرنری ہسپتال کے آفیسر ڈاکٹر تجمل حسین نے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا انہوں نے کہا کہ سیلاب متاثرہ علاقوں میں چار مراکز جن میں احمد پور سیال ،پیر عبدالرحمن ،گڑھ مہاراجہ اور پل گاگن شامل ہیں۔ہماری ٹیم میں ارشد منیر بھٹی،ریاض حسین بھٹی،ارشاد حسین گلشن اور مظفر حسین شامل ہیں جو دن رات عوام کی خدمت کے لئیے کو شاں ہیں۔ رحیم یار خان سے بیورو نیوز کے مطابق ڈی سی اورحیم یارخان کیپٹن(ر) محمد ظفراقبال نے کہاہے کہ سیلاب اورکانگووائرس سے بچاؤکے تمام انتظامات مکمل کرلیے گئے ہیں‘ ضلع بھرمیں ٹیمیں اپناکام احسن طریقے سے انجام دے رہی ہیں۔صدرپریس کلب راناامتیازاحمدخان کی قیادت میں ملنے والے ڈسٹرکٹ پریس کلب کے وفدسے گفتگوکرتے ہوئے سابق صدرڈسٹرکٹ پریس کلب ڈاکٹرممتازمونس اورحبیب اللہ ملک کے نوٹس دلانے پرانہوں نے یقین دلایاکہ آئندہ صحافیوں کے خلاف آنے والی درخواستوں کومیں خودسنوں گا۔اس موقع پرجنرل سیکرٹری پریس کلب عاصم صدیق ‘ محمدعارف ڈوگر‘ چوہدری جاویداقبال‘ رانااخلاق احمدخان ‘بلال حبیب‘ شبیراحمد‘ وسیم چوہدری اوردیگرممبران بھی موجودتھے۔ علی پور سے نمائندہ پاکستان کے مطابق تحصیل علی پور کے مواضعات بیٹ ملانوالی ،عظمت پور،بیٹ چنہ،مڈوالہ، گگڑیوالی، ڈمر والہ،مکھن بیلہ،بیٹ معززالدین،کچی لعل،چک ڈڈہ،بکھری،بیٹ برڑہ،ماڑیاں،لتی ،کندرالہ،بیٹ نوروالہ، خانگڑھ دوئمہ، سرکی میں فلڈ وارننگ جاری کردی گئی ہے مقامی انتظامیہ کی طرف سے مساجد میں اعلانات اور منادی کرائی گئی ہے متوقع سیلاب کے پیش نظر سیلاب سے متاثرہ ہونے والے مواضعات میں فلڈ ریلیف کیمپوں کاانعقاد کردیاگیا ہے گزشتہ روز اسسٹنٹ کمشنر علی پورمحمداقبال خان بزدار نے تحصیلدار علی پور محمداقبال عباسی،نائب تحصیلدار محمداعجاز مگسی کے ہمراہ فلڈ ریلیف کیمپوں کادورہ کیا تمام محکمہ جات کے افسران وعملہ موقع پر موجود تھے۔سیلاب متاثرین ہمہ قسمی معلومات کنٹرول روم کے نمبر 0662700620پرحاصل کرسکتے ہیں۔

فلڈ وارننگ

مزید : ملتان صفحہ آخر