سعودی ویزا قوانین میں اب تک کی سب سے بڑی تبدیلی کردی گئی

سعودی ویزا قوانین میں اب تک کی سب سے بڑی تبدیلی کردی گئی
سعودی ویزا قوانین میں اب تک کی سب سے بڑی تبدیلی کردی گئی

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

ریاض( مانیٹرنگ ڈیسک)سعودی حکومت نے اپنی ویزہ پالیسیوں میں نمایاں تبدیلیاں کی ہیں، سعودی ولی عہد شہزادہ محمد بن نائف کی زیر صدارت اجلاس میں تجاویزکو حتمی شکل بھی دے دی گئی ہے۔

عرب نیوز کے مطابق سعودی حکومت کی جانب سے بنائے گئے نئے ویزا قوانین کے تحت اب سعودی عرب میں سنگل انٹری کے لئے ویزہ فیس2000 سعودی ریال وصول کی جائے گی۔ جو افراد چھ ماہ کا ملٹی پل ویزہ لینے کے خواہش مند ہوں گے انہیں ویزہ فیس کی مد میں3000سعودی ریال کی ادائیگی کرنا ہوگی۔

نئے سعودی ویزہ قوانین کے تحت ایک سال کے لئے سعودی عرب کے ملٹی پل ویزہ کی فیس 5000 سعودی ریال کردی گئی ہے۔ دو سال کا ملٹی پل ویزہ اب 8000ریال میں ملے گا۔ٹرانزٹ ویزہ فیس بھی تبدیل ہوگئی ہے،اس مد میں اب 300 ریال کی ادائیگی کرنا پڑے گی۔ کنٹری ایگزٹ فیس بھی 50 ریال کردی گئی ہے۔ 2مہینے کی ایگزٹ ری انٹری پر فیس کی مد میں200ریال اور فی مہینہ 100ریال اضافی دینا ہوں گے۔

سعودی ولی عہد شہزاد محمد بن نائف کی زیر صدارت اجلاس میں ٹریفک قوانین کی خلاف ورزیوں پر جرمانوں میں اضافے کی منظوری بھی دی گئی۔ سعودی عرب میں ٹریف جرائم پر اب کم از کم جرمانہ1000 ریال ہوگا۔نئے قانون کے مطابق اگر آپ گاڑی چلاتے ہوئے حادثہ کر بیٹھتے ہیں تو آپ کو نہ صرف جائے حادثہ پر رکنا پڑے گا بلکہ متاثرہ افراد کوممکنہ امداد کی فراہمی کیلئے متعلقہ اداروں کو اطلاع بھی دینا ہوگی،ایسا نہ کیا تو کم از کم 10ہزار ریال جرمانہ ہوگا یا پھر تین ماہ کی قید بھگتناہوگی،جرمانہ اور قید دونوں سزائیں ایک ساتھ بھی ہوسکتی ہیں۔‎

مزید : عرب دنیا