’اس بارے میں کوئی بات کرنے سے پہلے اچھی طرح سوچ لینا‘ چین نے بڑے مغربی ملک کو سب سے خطرناک دھمکی دے دی، پوری دنیا کے سامنے شرمندہ کردیا کیونکہ۔۔۔

’اس بارے میں کوئی بات کرنے سے پہلے اچھی طرح سوچ لینا‘ چین نے بڑے مغربی ملک کو ...
’اس بارے میں کوئی بات کرنے سے پہلے اچھی طرح سوچ لینا‘ چین نے بڑے مغربی ملک کو سب سے خطرناک دھمکی دے دی، پوری دنیا کے سامنے شرمندہ کردیا کیونکہ۔۔۔

  

بیجنگ (نیوز ڈیسک) بین الاقوامی ثالثی عدالت کی جانب سے بحیرہ جنوبی چین کی خودمختاری کے متعلق دائر کئے گئے فلپائنی مقدمے کا فیصلہ چین کے خلاف آنے کے بعد امریکہ اور اس کے اتحادیوں کی اشتعال انگیزی بہت بڑھ گئی ہے ۔ آسٹریلیا نے بھی امریکہ کی شہہ پر چین کو عالمی عدالت کے فیصلے کا احترام کرنے کا مشوری دینے کی کوشش کی مگر جواب میں چین نے اسے ایسی ڈانٹ پلائی ہے کہ شاید اسے دوبارہ چین سے کچھ کہنے کی ہمت نہ ہوسکے۔

ویب سائٹ CBCکی رپورٹ کے مطابق چین نے آسٹریلیا سے سخت اور واضح الفاط میں کہہ دیا ہے کہ وہ اپنے دائرے میں رہے اور چین کو سبق دینے سے پہلے اچھی طرح سوچ سمجھ لے کہ اس کا ردعمل کیا ہو گا۔ آسٹریلوی حکام چین کا یہ جواب سن کر بری طرح ہل گئے ہیں جبکہ آسٹریلوی میڈیا بھی خوب شور مچارہا ہے۔

سمندر کے بیچوں بیچ جاپان کو چین کی جانب سے لگائی گئی ایسی خفیہ چیز مل گئی کہ ہنگامہ برپاہوگیا، ایسی کیا چیز ہے کہ دونوں ممالک جنگ کے دہانے پر آگئے؟ جان کر آپ بھی پریشان ہوجائیں گے

آسٹریلوی میڈیا کا کہنا ہے کہ ایک خودمختاری ریاست کو کسی دوسری ریاست کی جانب سے اس طرح مخاطب کرنے کا کوئی حق حاصل نہیں ہے۔ آسٹریلیامیں چین کی جانب سے سامنے آنے والے بیانات کو حد سے زیادہ سخت اور سنگین قرار دے کر تنقید کا نشانہ بنایا جارہا ہے۔

امریکہ اور اس کے اتحادیوں کے لئے عالمی ثالثی عدالت کا فیصلہ بہت بڑی خوشخبری ثابت ہوا تھا، مگر حال ہی میں منعقد ہونے والی علاقائی تنظیم آسیان کی میٹنگ نے ان کی امیدوں پر پانی پھیر دیا ہے۔ آسیان کے رکن ممالک میں سے چار چین کے ساتھ تنازعے میں الجھے ہوئے ہیں لیکن جب ان ممالک کی ملاقات کے بعد مشترکہ اعلامیہ جاری کیا گیا تو اس میں عالمی ثالثی عدالت کے چین کے خلاف فیصلے کا ذکر تک نہ تھا۔ امریکہ اس بات پر حیران اور پریشان ہے کہ چین کے مخالف تمام ممالک نے ایک اہم موقع گنوادیا اور مشترکہ اعلامیے میں چین کے خلاف ایک لفظ تک شامل نہیں کیا۔

واضح رہے کہ چینی حکومت کے موقف کے ترجمان اخبار گلوبل ٹائمز کی جانب سے اپنے اداریے میں آسٹریلیا کو ”کاغذی بلی“ اور ”شرمناک تاریخ کا مالک ملک“ بھی قرار دیا جاچکا ہے، جس پر آسٹریلوی حکومت اور عوام بری طرح تڑپ اٹھے ہیں۔

مزید : بین الاقوامی